سورۃ فاتحہ تلاوت کرتے ہوئے ننھی ہند کی روح پرواز کر گئی، نئی ریکارڈنگ منظر عام پر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

جنوبی غزہ کی پٹی میں اسرائیلی فوجی کارروائیوں میں ماری جانے والی چھ سالہ ہند رجب کی ایک نئی ریکارڈنگ سامنے آئی ہے جس میں اسے فوجیوں کے حملے میں مارے جانے سے قبل سورۃ فاتحہ پڑھتے سنا جا سکتا ہے۔

خیال رہے کہ گذشتہ دنوں اسرائیلی فوجی کارروائیوں کے دوران جاں بحق ہونے والی چھ سالہ رجب کی موت کے واقعے نے پوری دنیا کو ہلا کررکھ دیا تھا۔

فلسطینی ہلال احمر کے فیس بک پیج پرپوسٹ کی گئی اس ریکارڈنگ میں ہلال احمر کی ایک کارکن کی طرف سے قرآن پاک کی آیات پڑھ کرخود کو تسلی دینے کی کوشش کرتے سنا جا سکتاہے۔

آڈیو ریکارڈنگ میں رنا نامی پیرامیڈک نے بچی سے کہا کہ "کیا ہمیں قرآن اور کچھ دعائیں پڑھنی چاہئیں؟ تمہارا کیا خیال ہے؟"۔ پھر اس نے سورۃ الفاتحہ کی تلاوت شروع کی۔ ہلال احمر کے کارکن کی آواز میں جذبات بھر آئے۔ ہند خاتون کارکن کے ساتھ سورۃ فاتحہ کی آیات کو دہراتی مگراس کا جسم خوف سے کانپ رہا تھا۔

قابل ذکر ہے کہ فلسطینی ہلال احمر نے 10 فروری کو اعلان کیا تھا کہ 12 روز قبل تل الھویٰ میں چھ سالہ ہند رجب اور اس کے خاندان کے پانچ افراد کی لاشیں ملی تھیں۔ رجب اور اس کے خاندان کے افراد پر مشتمل اس گاڑی کو اسرائیلی فوج نے روک دیا تھا اور اس کا محاصرہ کیا گیا۔

اس دوران اس پر ٹینکوں سے گولہ باری کی گئی جس کے نتیجے میں ہند رجب اور دیگر افراد مارے گئے تھے۔ انہیں بچانے کے لیےآنے والے ہلال احمر کے دو کارکنوں کو بھی اسرائیلی فوج نے موت کی نیند سلا دیا تھا۔

مارے جانے والے دیگر افراد میں اس کی 14 سالہ ماموں زاد بھی شامل تھیں۔

ہلال احمر نے وضاحت کی کہ اسرائیلی فوج نے جائے وقوعہ پر پہنچنے پر ایمبولینس کو دانستہ طور پر نشانہ بنایا، کیونکہ یہ بچی ہند کی گاڑی سے چند میٹر کے فاصلے پر تھی جہاں اسے نشانہ بنا کر قتل کیا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں