سعودی معیشت

سعودی عرب تیل کی پیداوار میں ایک ملین بیرل یومیہ رضاکارانہ کمی جون تک جاری رکھے گا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی وزارت توانائی کے ایک سرکاری ذریعے نے اعلان کیا ہے کہ ’سعودی عرب تیل کی پیداوار میں دس لاکھ بیرل یومیہ کی رضاکارانہ کمی کو جاری رکھے گا‘۔

سرکاری خبر رساں ایجنسی ’ایس پی اے‘ کے مطابق پیداوار میں کمی کی پالیسی کا اطلاق جولائی 2023 میں ہوا تھا اور اس میں جون 2024 کے آخر تک توسیع کی گئی ہے۔ سعودی عرب کی پیداور تقریبا نو ملین بیرل یومیہ ہوگی۔

ذرائع نے بتایا مارکیٹ کے حالات کے مطابق اس کمی کے فیصلے پر نظر ثانی کی جائے گی جس میں رضاکارانہ کمی کو جاری رکھنے، کمی کو بڑھانے یا پیداوار میں اضافے پر غور کیا جائے گا۔

ذرائع نے یہ بھی کہا کہ یہ کمی رضاکارانہ طور پر کی جانے والی پانچ لاکھ بیرل یومیہ کمی کے علاوہ ہے جس کا اعلان مملکت نے اپریل 2023 میں کیا تھا اور جو دسمبر 2024 کے آخر تک جاری رہے گی۔

یہ اضافی رضاکارانہ کمی اوپیک پلس ممالک کی جانب سے تیل کی منڈیوں کے استحکام اور توازن کو سپورٹ کرنے کے مقصد سے کی جانے والی احتیاطی کوششوں کو تقویت دینے کے لیے ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں