ترکیہ نے موساد کے لیے جاسوسی کے الزام میں چھ افراد کو گرفتار کر لیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

ترکیہ کی انٹیلی جنس ایجنسی (ایم آئی ٹی) نے جمعہ کو بتایا کہ ترک حکام نے چھ افراد کو گرفتار کیاہے۔ ان افراد پر اسرائیل کی موساد انٹیلی جنس سروس کے لیے جاسوسی کا الزام ہے۔

منگل کو ایم آئی ٹی نے کہا تھا کہ پولیس نے موساد کو معلومات فروخت کرنے کے الزام میں سات افراد بشمول ایک نجی جاسوس کو حراست میں لیا گیا۔ اس نے جمعہ کو کہا کہ ان میں سے چھ کو گرفتار کر لیا گیا اور ایک کو ضمانت پر رہا کر دیا گیا۔

اسرائیل کی جانب سے فوری طور پر کوئی تبصرہ نہیں کیا گیا۔

ترکی کی ایک عدالت نے جنوری میں 15 افراد کی گرفتاری اور موساد سے تعلق رکھنے اور ترکی میں مقیم فلسطینیوں کو نشانہ بنانے کے الزام میں آٹھ دیگر افراد کو ملک بدر کرنے کا حکم دیا تھا۔ گذشتہ ماہ ترکی نے موساد کو معلومات فروخت کرنے کے شبے میں سات دیگر افراد کو حراست میں لیا تھا۔

گزشتہ اکتوبر میں فلسطینی گروپ حماس کے ساتھ اسرائیل کی جنگ شروع ہونے کے بعد سے ترک اور اسرائیلی رہنماؤں نے عوامی سطح پر سخت الفاظ کا تبادلہ کیا ہے۔ ترکی نے اسرائیل کو خبردار کیا ہے کہ اگر اس نے ترکی سمیت فلسطینی علاقوں سے باہر رہنے والے حماس کے ارکان کو تلاش کرنے کی کوشش کی تو اس کے "سنگین نتائج" برآمد ہوں گے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں