متحدہ عرب امارات اور کویت میں سمگلنگ کی کوشش ناکام، منشیات کی 37 لاکھ گولیاں ضبط

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات اور کویت حکام نے ایک بڑی کارروائی کی ہے جس کے نتیجے میں منشیات کی گولیاں ضبط کی گئی ہیں۔ اسیریل منشیات کی 37 لاکھ سے زائد گولیاں حکام نے ضبط کی ہیں۔

متحدہ عرب امارات کے خبر رساں ادارے 'ڈیبلیو اے ایم' نے جمعہ کے روز رپورٹ کیا ہے کہ عجمان میں 57.2 ملین لیریکا گولیاں ضبط کی گئی ہیں۔ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ لیریکا گولیاں لے جانے والے شخص کو بھی گرفتار کر لیا گیا ہے۔ واضح رہے لیریکا گولیاں ڈپریشن اور مرگی کے علاج کے لیے استعمال کی جاتی ہیں۔

خیال رہے کویت کے ہوائی اڈے پر منشیات کی 10 لاکھ گولیاں پکڑے جانے کے بعد متحدہ عرب امارات میں یہ کارروائی کی گئی ہے۔ کویت میں منشیات سمگل کرنے والے دو لوگوں کو بھی گرفتار کیا گیا ہے۔

جاری کردہ رپورٹ میں کہا گیا ہے کہ دونوں ممالک کی وزارت داخلہ کے درمیان منشیات پکڑے جانے کے بعد کے پراسس سے متعلق بات چیت جاری ہے اور قانونی امور کا جائزہ لیا جا رہا ہے۔ منشیات کی سمگلنگ کی کوششیں لوگوں کی صحت کے لیے نقصان دہ ہیں۔ سمگلنگ کی کوششوں کو ناکام بنا کر افراد کی صحت و سیکیورٹی کو یقینی بنایا گیا ہے۔

متحدہ عرب امارات کی وزارت داخلہ میں فیڈرل نارکوٹکس کنٹرول یونٹ کے ڈائریکٹر جنرل بریگیڈیئر سعید عبداللہ السویدی نے نارکوٹکس کنٹرول یونٹ کی اہمیت بتاتے ہوئے کہا 'غیرقانونی نیٹ ورکس کی فنڈنگ کے ذریعوں کی کھوج لگانے اور ان کو جڑ سے ختم کرنے کے لیے ڈیپارٹمنٹ کام کر رہا ہے۔'

خیال رہے متحدہ عرب امارات کے سرحدی علاقوں سے ہونے والی غیر قانونی سمگلنگ کو روکنے کے لیے دبئی مختلف آپریشنز کرتا رہتا ہے۔ گزشتہ ماہ دبئی کسٹم حکام نے افریقی ملک سے آنے والی چرس کو ضبط کیا تھا۔ یہ منشیات پیاز کے تھیلوں میں رکھی گئی تھیں۔ دبئی حکام نے ٹراماڈول کی 234000 گولیاں ضبط کیں اور سمگلنگ کی کوشش کو ناکام بنایا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں