حماس غزہ کی باگ ڈور فلسطینی اتھارٹی کے سپرد کردے: صدارتی مشیر

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

فلسطینی اتھارٹی کے سربراہ محمود عباس کے مشیر محمود الھباش نے حماس پر زور دیا ہے کہ وہ غزہ کا انتظام فلسطینی اتھارٹی کے حوالے کردے۔

انہوں نے یہ بات ایک ایسے وقت میں کی ہے جب دوسری جانب فلسطینی اتھارٹی کی نئی حکومت کی تشکیل کی جا رہی ہے۔

انہوں نے اتوار کے روز کہا کہ نئی حکومت غیر جماعتی ہوگی۔ یہ سیاستی وابستگی سے آزاد شخصیات اور ماہرین پر مشتمل ہوگی۔ انہوں نے حماس سے مطالبہ کیا کہ وہ غزہ کی پٹی میں اقتدار کی باگ ڈور فلسطینی اتھارٹی کے حوالے کردے۔

محمود عباس کے مشیر نے مزید کہا کہ "تمام فلسطینیوں کا حکومت سے مطمئن ہونا ضروری ہے، لیکن انہوں نے نشاندہی کی کہ نئی حکومت میں شامل وزراء اور وزیراعظم کی حتمی منظوری محمود عباس دیں گے۔

پی ایل او کے اصولوں پرعمل درآمد

محمود الھباش نے زور دے کر کہا کہ نئی حکومت کو پی ایل او کے اصولوں پر قائم کیا جائے گا۔

محمد اشتیہ
محمد اشتیہ

انہوں نے کہا کہ ابھی تک نئی حکومت کا تعین نہیں ہوا ہے۔

ادھر تحریک فتح نے العربیہ/الحدث کو بتایا کہ فلسطینی اتھارٹی فلسطینیوں کے مستقبل کی تنہا ذمہ دار ہے۔انہوں نے کہا کہ مستقبل کی کسی بھی حکومت کا مشن غزہ میں اسرائیلی قبضے کا خاتمہ اور جنگ کو روکنا ہوگا۔

درایں اثناء حماس نے کہا ہے کہ غزہ کی پٹی پر اکیلے حکومت کرنے کی اس کی کوئی خواہش نہیں۔ تاہم حماس نے غزہ اور غرب اردن میں متفقہ حکومت کی تشکیل پر زور دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں