عراق:عوامی حلقوں کا رمضان کے دوران دن کے اوقات میں ہوٹل کھلے رکھنے کا مطالبہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

ماہ صیام کے آغاز کے ساتھ ہی عراق میں عوامی حلقوں کی طرف سے دن کے اوقات میں ہوٹل کھلنے رکھنے کا مطالبہ سامنے آیا ہے۔

ہوٹل کھلے رکھنے کی اپیل

سوشل میڈیا پر سامنے آنے والی اپیل میں عوامی حلقوں کا کہنا ہے کہ حکام رمضان المبارک کے دوران دن کے اوقات میں ہوٹل کھلے رکھنے کی مشروط طور پر اجازت دیں تاکہ روزہ داروں کے روزے کے احترام کے ساتھ ساتھ ہوٹل مالکان اور ان میں کام کرنے والے کارکنوں کی روزی روٹی بھی چلتی رہے۔

دوسری جانب بغداد حکومت نے ہفتے کے روز ایک بیان میں کہا تھا کہ وہ رمضان المبارک کے دوران ہوٹلوں اور نائٹ کلبوں کی سخت نگرانی کرے گی۔

ایک حکومتی عہدیدار نے اپنی شناخت مخفی رکھنے کی شرط پر بتایا کہ تمام نائٹ کلب اور شراب کی دکانیں رمضان کے دوران مکمل طور پربند ہوں گی۔ اگر کسی نے حکومتی احکامات اور فیصلوں سے انحراف کیا تو اسے اس کی سزا بھگتا ہوں جو تین ماہ قید اور جرمانے پر مشتمل ہوسکتی ہے۔

ذریعے نے مزید کہا کہ رمضان میں ہوٹلوں کو دن کے اوقات میں بند رکھنے کی ہدایات ہیں تاہم اگر کسی ہوٹل کو کھلا رکھنا ہے تو اس کے مالکان اس حوالے سے حکومت سے پیشگی اجازت لینےکے پابند ہوں گے۔

ذریعے کا کہنا تھا کہ دن کے وقت ہوٹل کھولنے والوں کے لیے ایک شرط یہ ہے کہ وہ کھلے عام کھانا فروخت نہیں کریں گے۔ ہوٹل کو سفید کپڑے میں ڈھانپا جائے گا تاہم ضوابط کی خلاف ورزی پر ہوٹل مالک کو قانون کا سامنا کرنا پڑے گا۔

خیال رہے کہ عراق سمیت کئی عرب ممالک میں آج گیارہ مارچ کو یکم رمضان المبارک اور پہلا روزہ ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں