سعودی عرب میں تعمیر ہونے والےدنیا کے جدید ’ڈاؤن ٹاؤن‘ کے بارے میں ہم کیا جانتے ہیں؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سعودی عرب کی پبلک انویسٹمنٹ فنڈ کمپنیوں [پی آئی ایف] میں شامل نیو اسکوائر ڈویلپمنٹ کمپنی نے "نیو ڈاؤن ٹاؤن" کے قیام کے ذریعے دارالحکومت ریاض میں شہری ترقی کو از سر نو تشکیل دینے کے فریم ورک کے اندر نیا ترقیاتی منصوبہ شروع کیا ہے جو کہ دنیا کا سب سے جدید شہرہوگا۔ اس میں جدت اور ٹیکنالوجی فطرت اور پائیداری کے ساتھ ہم آہنگ ہوگا۔ اس منصوبے میں سرمایہ کاروں اور رئیل اسٹیٹ ڈویلپرز کے لیےسرمایہ کاری کے بے شمار مواقع ہیں اور یہ شہر دارالحکومت کا دھڑکتا دل بن جائے گا۔

"عالمی سطح پر شہری ترقی کو نئی شکل دینا"

فرانسیسی شہر کانز میں منعقد ہونے والی "MIPIM 2024" نمائش میں کمپنی کی شرکت کے موقع پر نیو اسکوائر کے سی ای او مائیکل ڈیک نے کہا کہ ہماری شرکت سرمایہ کاروں کو ان مواقع سے فائدہ اٹھانے کی ترغیب دیتی ہے جو ہم فراہم کرتے ہیں۔ شہری ترقی کو از سر نو تشکیل دینے میں تعاون کو متعارف کروانے کے علاوہ ہم عالمی سطح پر ہم بہت سی دوسری عالمی منزلوں کو طے کر رہے ہیں۔

نیواسکوائر ڈویلپمنٹ کمپنی نے 4 ملین مربع میٹر سے زیادہ کے رقبے پر کھدائی کرکے نیو ڈاؤن ٹاؤن کے وسط میں تعمیر کی جانے والی یاد گارعمارت کی بنیاد رکھی جا سکے۔

"مملکت میں تازہ ترین معروف منزلیں"

ریاض کے علاقے کا جدید مرکز مملکت کا جدید ترین مقام ہے، کیونکہ یہ معیشت کو متنوع بنانے میں اہم کردار ادا کرے گا اور وژن 2030 کےاہداف کا حصہ ہے، کیونکہ کمپنی کی شرکت شہری ترقی کے مستقبل کی تعمیر کے عزم کی نمائندگی کرتی ہے۔

کمپنی کی ویب سائٹ کے مطابق "نیو ڈاؤن ٹاؤن " صرف رہنے اور کام کرنے کی جگہ نہیں ہے، بلکہ یہ ریاض کا دھڑکتا دل ہے، جس کے ذریعے کمپنی ایک متحرک ادارہ جاتی ماحول کے ساتھ ساتھ ترقی کا مرکز، فطرت کی خوبصورتی اور دارالحکومت کی مستند ثقافت کے ساتھ ہم آہنگی میں تخلیقی صلاحیتیں اور کاروباری صلاحیتوں کو بروئے کار لا رہی ہے۔

80 تفریحی اور ثقافتی علاقے

یہ نیا شہر 19 ملین مربع میٹر کے رقبے پر پھیلا ہوا ہے، جس کے درمیان میں ایک مشہور تاریخی نشان ہے۔ اس میں 420,000 سے زیادہ لوگوں اور دیگر زائرین کے لیے 80 سے زیادہ تفریحی اور ثقافتی علاقے شامل ہیں۔ سائٹ کے مطابق یہ شہر لامحدود امکانات کی دنیا میں ہر ایک کا خیرمقدم کرتے ہوئے تحریک کا ذریعہ بنے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں