سعودی عرب: اڑھائی سول سال پرانی بستی ’لبدہ‘ حائل کی تاریخی یادگار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے علاقے حائل میں موجود ’لبدہ‘ ایک تاریخی محلہ ہے جو شہر کے مرکز جبل السمراء کے قریب حائل شہر کے مشرقی حصے میں واقع ہے۔ یہ ایک پرانی بستی ہونے کے ساتھ ساتھ ایک اہم تاریخی مقام بھی ہے۔

سعودی ثقافتی ورثہ اور نوادرات کے ماہر عبد الالہ الفارس نے بتایا کہ لبدہ کی 250 سال سے زیادہ پرانی ہے۔اس میں کوئی قدیم مکان باقی نہیں بچا ہے۔ محلے میں کچھ تاریخی عمارتوں کے کھنڈرات اور کچھ مکانات کے نشانات ہیں جو ہمیں قدیم ماضی کی کہانی بیان کرتے ہیں۔ لبدہ کا شمار سعودی عرب کی پرانی بستیوں میں ہوتا ہے۔

خطوط عربية تزين جدارن المباني

الفارس نے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ سے بات کرتے ہوئے کہا کہ لبدہ ایک پرانا محلہ ہے، جو حائل شہرکے مشہور محلوں میں سے ایک ہے۔ اسے مشہور شخصیات کی بستی کے نام سے جانا جاتا تھاْ اس محلے سےمتعلق کہانیاں اور واقعات ہیں۔ ایک صدی سے بھی زیادہ پہلےیہاں علمی تحریک کے پھلنے پھولنے کے آثار سامنے آئے۔ یہ جگہ تہذیبی اور ثقافتی ورثے کو مجسم کرنے کی پہچان بن کر سامنے آئی۔ اسے پچھلی صدیوں سے اپنے باشندوں کی شناسائی، محبت اور ایک دوسرے سے جڑے رہنے کے لیے جانا جاتا ہے۔

انہوں نے مزید کہا کہ محلہ ایک منفرد شہری کردار اور آرائشی نوشتوں کے ساتھ کچے مکانات کے آثار سے بھرا ہوا ہے۔ یہاں چینی مٹی کی عمارتوں کے نشانات ملتے ہیں۔ ان مکانات میں موجود بیٹھکوں کو منفرد جپسم نوشتوں اور سجاوٹ سے سجایا جاتا۔ یواروں پرعربی خطاطی اور ثلث رسم الخط کی عبارتوں کے نمونے ملتے ہیں اور خوبصورت تعمیراتی نوشتہ جات پائے جاتے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں