ہم نے رفح میں حماس کے چار سینیر رہ نماؤں کو ہلاک کر دیا: اسرائیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی فوج نے آج بدھ کے روز کہا ہے کہ اس نے رفح پر ایک فضائی حملہ میں چار افراد کو ہلاک کر دیا ہے جو اس کے بہ قول حماس کے سینیر رہنما تھے۔

انہوں نے مزید کہا کہ مرنے والوں میں سید الحشاش، اسامہ ضہیر اور محمد الملالحی شامل ہیں۔ اسرائیلی فوج نے انہیں شمالی اور مشرقی رفح میں ہنگامی کمیٹیوں کے سربراہان قرار دیا۔

اسرائیلی فوج نے کہا کہ فوج نے ہادی ابو الروس کو بھی نشانہ بنایا جو ان کے بہ قول حماس میں "ایمرجنسی کمیٹیوں کے آپریشنز آفیسر کے عہدے پر فائز تھے"۔

اسرائیلی فوج نے نشاندہی کی کہ چاروں رہ نماؤں کی ہلاکت نضال العید کے قتل کے بعد ہوئی، جسے گذشتہ ہفتے ہلاک کیا گیا تھا۔ وہ رفح گورنری میں ہنگامی کمیٹیوں کے سربراہ کے طور پر کام کر رہے تھے۔

دوسری جانب حماس نے ابھی تک اپنے چار ارکان میں سے کسی کی ہلاکت کی تصدیق نہیں کی ہے۔

یہ اعلان ایک سینیر امریکی اہلکار کے انکشاف کے بعد سامنے آیا ہے کہ ان کا ملک اس ہفتے ہونے والی امریکی اسرائیلی میٹنگ کے دوران تجویز کرے گا کہ اسرائیل مصر اور غزہ کے درمیان سرحد کو رفح پر حملے کے متبادل کے طور پر مزید محفوظ بنائے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں