سعودی تن ساز طلال ہوسہ رمضان میں اپنا وقت کیسے گذارتے ہیں؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے نوجوان طلال ہوسہ نے نہ صرف تن سازی میں علاقائی اور بین الاقوامی کھیلوں کی چیمپئن ہیں بلکہ اس کے ساتھ ساتھ وہ سوبیا بیچنے کے پیشے کو بھی آگے بڑھا رہے ہیں۔

طلال ہوسہ باڈی بلڈنگ چیمپیئن شپ میں کئی ایوارڈز جیت چکے ہیں۔ وہ اپنا زیادہ تر وقت خاص طور پر رمضان کے موسم میں سوبیا بیچنے اور رمضان کی راتوں میں ورزش کرنے میں صرف کرتے ہیں تاکہ سعودی تن سازی ٹیم میں شامل ہونے کا مقابلہ کیا جا سکے۔

طلال ہوسہ سے ’العربیہ ڈاٹ نیٹ‘ کی ٹیم نے مدینہ منورہ میں ملاقات کی۔ انہوں نے بتایا کہ میں نے اپنے کھیل کے کیریئر کا آغاز 2021ء میں کیا کیونکہ یہ مصر میں بین الاقوامی سطح پر پہلا ٹورنامنٹ تھا جس میں اس نے حصہ لیا جس کے بعد اس نے دوسری پوزیشن حاصل کی۔ اس نے عمان چیمپئن شپ اور سعودی عرب میں ایک اور ٹورنامنٹ میں حصہ لیا جس میں اس نے تقریباً پہلی پوزیشن حاصل کی۔

انہوں نے کہا کہ"شروع میں میں نے کلب میں اپنا وقت گذرنا شروع کیا اور مجھے اپنے رشتہ داروں اور دوستوں کی حوصلہ افزائی بھی ملی۔ جب سے پہلی بار میں نے شرکت کی، میں نے اپنے اندر 'پیشہ ورانہ مہارت' تک پہنچنے کی صلاحیت دیکھی۔ اس لیے میں نے خود کو چیلنج کرنا شروع کر دیا اور اس شعبے میں سبقت حاصل کرنے کی کوشش کرنا شروع کر دی کیونکہ یہ صرف میرا جذبہ ہے جس نے مجھے ایک دن یہ پوزیشن حاصل کرنے پر مجبور کر دیا"۔

انہوں نے نشاندہی کی کہ فیزیک کے زمرے کے ٹورنامنٹس میں داخلے کا معیار اس بات پر منحصر ہوتا ہے کہ کھلاڑی کا جسم کتنا خوبصورت ہے۔ اس میں کمر میں کتنی چھوٹی اور کتنی چوڑی ہونی چاہیے کو دیکھا جاتا ہے۔ کمر حرف ’V‘ کی شکل میں ہوتو موزوں سمجھی جاتی ہے۔ اس کے علاوہ پٹھوں میں ہم آہنگی اور پٹھوں کی خشکی دیکھی جاتی ہے۔ جبکہ باڈی بلڈنگ میں 6 زمرے شامل ہیں۔ ان میں پٹھوں کے سائز، کوآرڈینیشن اور پٹھوں کی وضاحت کی سطح پر توجہ مرکوز کی جاتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں