سال 2023ء میں سعودی عرب بیرون ملک سے آنے والے سیاحوں پر 135 ارب ریال خرچ کیے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب نے 2023ء کے دوران بیرون ملک سے مملکت آنے والے زائرین اور سیاحوں کی طرف سے اخراجات کے ایک نئے ریکارڈ کا انکشاف کیا ہے۔

ادائیگیوں کے توازن میں سفری اشیاء کے حوالے سے سعودی عرب کے مرکزی بینک کے ابتدائی اعداد و شمار سے پتا چلتا ہے کہ پچھلےسال بیرون ملک سے آنےوالے سیاحوں اور زائرین پرسعودی عرب نے 135 ارب اریال خرچ کیے۔ آنے والے زائرین کے اخراجات کے حوالے سے یہ رقم مملکت کی تاریخ میں سب سے زیادہ ہے۔ اسی طرح یہ شرح بیرون ملک سےآنے والوں کے سال 2022ء کے اخراجات مقابلے میں 42.8 فیصد زیادہ ہے۔

بیرون ملک سے سعودی عرب آنے والے زائرین کے اخراجات میں تاریخی اضافہ سعودی سیاحت کے شعبے کی مسلسل کامیابیوں کے سلسلے کی کڑی ہے، کیونکہ سعودی عرب 2023ء کے مقابلے میں بین الاقوامی سیاحوں کی تعداد میں اضافے کی شرح میں اقوام متحدہ کی سیاحت کی فہرست میں سرفہرست ہے۔ بڑے سیاحتی ممالک کے لیے 2019ء کے بعد سال 2023ء میں آنے والے سیاحوں کی تعداد میں 56 فی صد کا اضافہ ہوا، جنوری 2024ء میں اقوام متحدہ کی سیاحت کی طرف سے جاری کردہ بیرومیٹر رپورٹ کے مطابق سال 2023ء کے دوران آنے والے سیاحوں کی تعداد میں 156 فی صد اضافہ ہوا۔

مملکت کو اس سے قبل ورلڈ ٹورازم آرگنائزیشن (یو این ٹورازم) اور ورلڈ ٹریول اینڈ ٹورازم کونسل (ڈبلیو ٹی ٹی سی) کی جانب سے 2023ء کے دوران اندرون و بیرون ملک سے 100 ملین سے زیادہ سیاحوں کی مملکت میں آمد کی وجہ سے عالمی سطح پر پذیرائی حاصل ہوئی تھی۔ دونوں تنظیموں نے مملکت میں سیاحت کے شعبے میں عظیم کوششوں کو سراہا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں