20 سال تک خدمات انجام دینے والے آئمہ مساجد،علماء کودبئی کا گولڈن ویزا دینے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

دبئی کے ولی عہد شیخ حمدان بن محمد بن راشد المکتوم کی طرف سے اعلان کیا گیا ہے کہ دبئی میں 20 سال تک مذہبی خدمات انجام دینے والے آئمہ حضرات اور علمائے کرام کو انعمات سے نوازا جائے گا۔ اس سلسلے میں پہلی بار انہیں دبئی کا اہم ترین گولڈن ویزا بھی پیش کیا جا رہا ہے۔

گولڈن ویزا دبئی میں طویل مدت تک رہنے کا اجازت نامہ ہے۔ جس کی مدت پانچ سے دس سال ہوتی ہے۔ یہ ویزہ رکھنے والا ہر غیر ملکی یہاں رہنے، کام کرنے اور تعلیم حاصل کرنے کا حق حاصل کر لیتا ہے۔ حتیٰ کہ بیوی بچوں کی کفالت کا اختیار بھی اسے مل جاتا ہے اور عمر کے کم یا زیادہ ہونے کا معاملہ بھی اس ویزے کی راہ میں رکاوٹ نہیں بنتا۔

خیال رہے پچھلے ماہ ہی شیخ حمدان نے دبئی میں کام کرنے والے آئمہ مساجد اور مؤذن حضرات کی تنخواہوں میں اضافے کا بھی اعلان کیا ہے۔ علاوہ ازیں عید الفطر کے موقع پر مذہبی شخصیات کو مالی انعامات سے بھی نوازا جاتا ہے۔

دبئی کا گولڈن ویزا رکھنے والے غیر ملکیوں کو دبئی میں کاروبار کرنے کا بھی حق مل جاتا ہے۔ علماء کو یہ ویزا ملنے کے بعد ان کے پاس یہ سہولت ہوگی کہ وہ بڑے کاروباریوں کی طرح چاہیں تو دبئی میں کاروبار بھی شروع کر سکتے ہیں۔ علماء کے لیے یہ ایک بڑی پیش کش سامنے آئی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں