حزب اللہ کے اسرائیلی فوجیوں کے اجتماع پر میزائلوں سے حملہ

جنوبی لبنان کے علاقے عیتا الشعب پر اسرائیلی فوج نے حملہ کیا ہے: العربیہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

لبنانی حزب اللہ گروپ نے ہفتے کے روز اعلان کیا کہ اس نے سرحد پر اسرائیلی فوجیوں کے ایک اجتماع کو ایک ایسے وقت میں نشانہ بنایا جب اسرائیلی فوج نے سائرن بجانے کا اعلان کیا۔ دوسری جانب العربیہ کے نمائندے نے اطلاع دی ہے کہ جنوبی لبنان میں عیتا الشعب پر اسرائیلی فوج نے بھی حملہ کیا ہے۔

حزب اللہ کے ایک بیان میں کہا گیا کہ ہفتہ کی سہ پہر اس کے ارکان نے شتولا بیرک کے آس پاس اسرائیلی فوجیوں کے ایک اجتماع کو میزائل ہتھیاروں سے براہ راست نشانہ بنایا۔

اس سے پہلے اسرائیلی فوج نے کہا کہ اس نے رات کے وقت لبنان سے شمالی اسرائیل میں شتولا کے علاقے تک پانچ شوٹنگ اور میزائل حملے کئے گئے تاہم کسی جانی نقصان کی اطلاع نہیں ملی۔ فوج نے مزید کہا کہ اس کے فوجیوں نے جواب میں میزائل لانچ کے ذریعہ پر بمباری کی ہے۔ اسرائیلی فوج نے کہا ہے کہ اس کے طیاروں نے جنوبی لبنان میں عیتا الشعب، ارنون اور طیر حرفہ کے علاقوں میں حزب اللہ کے متعدد انفراسٹرکچر پر بمباری کی ہے۔

ایک روز قبل حزب اللہ نے اسرائیلی حملوں میں اپنے چار ارکان کے جاں بحق ہونے کا اعلان کیا تھا۔ امل موومنٹ نے اسرائیلی بمباری میں اپنے تین ارکان کی موت کا اعلان کیا تھا۔

7 اکتوبر کو غزہ میں جنگ شروع ہونے کے اگلے روز سے لبنان اور اسرائیل کے مابین بھی فائرنگ اور بمباری کا تبادلہ جاری ہے۔ اسرائیلی حملوں کے باعث لبنان میں 405 افراد جاں بحق ہو چکے ہیں۔ ان مرنیوالوں میں حزب اللہ کے 260، امل موومنٹ کے 17، حماس اور تحریک اسلامی جہاد کے 33 ارکان بھی شامل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں