مغربی کنارے کی فائرنگ میں اسرائیلی فوجی شدید زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

اسرائیلی فوج نے کہا کہ اتوار کے روز مقبوضہ مغربی کنارے میں ایک ہائی وے پر بندوق کے حملے میں ایک اسرائیلی خاتون فوجی بری طرح زخمی ہو گئی۔

انہوں نے بتایا کہ ایک مسلح شخص نے ایک گاڑی سے نکل کر ہائی وے 55 پر نبی الیاس جنکشن پر گاڑیوں پر فائرنگ کی پھر فرار ہو گیا۔

فوج نے ایک بیان میں کہا، "فوجی اور اسرائیلی فضائیہ کے ایک طیارے نے علاقے کو گھیرے میں لے رکھا ہے اور دہشت گردوں کا تعاقب جاری رکھے ہوئے ہیں۔"

فوج نے مزید کہا، فوجی جس کی عمر اسرائیلی میڈیا نے 19 سال بتائی ہے، "شدید زخمی" تھی اور ایک شہری کو ہلکی چوٹ آئی۔

اکتوبر میں غزہ کی پٹی میں اسرائیل اور حماس کے درمیان جنگ شروع ہونے کے بعد سے مغربی کنارے میں تشدد میں اضافہ ہوا ہے۔

گذشتہ ہفتے مغربی کنارے کے شہر اریحا کے قریب ایک اسکول بس اور کئی دیگر گاڑیوں پر بندوقوں کے حملے میں ایک 13 سالہ لڑکے سمیت تین افراد زخمی ہو گئے تھے۔

رام اللہ میں فلسطینی وزارتِ صحت کے مطابق جنگ شروع ہونے کے بعد سے مغربی کنارے میں اسرائیلی فوجیوں یا آباد کاروں کے ہاتھوں کم از کم 459 فلسطینی ہلاک ہو چکے ہیں۔

اسرائیلی حکام کہتے ہیں کہ اسی عرصے کے دوران وہاں حملوں میں کم از کم 17 اسرائیلی فوجی اور شہری ہلاک ہو چکے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں