اسرائیل کے پاس ایران کیخلاف سٹریٹجک اتحاد بنانے کا موقع ہے: گیلنٹ

ہماری فوج نے ایرانی حملے کا مقابلہ کرنے میں شاندار نتائج حاصل کیے ہیں: اسرائیلی وزیر دفاع

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی وزیر دفاع یوو گیلنٹ نے اتوار کے روز کہا ہے کہ تہران کی طرف سے ڈرونز اور میزائلوں سے شروع کیے گئے بڑے حملے کے جواب میں متعدد ملکوں کی مذمتی رد عمل کے تناظر میں اسرائیل کے پاس ایران کے خلاف سٹریٹجک اتحاد بنانے کا موقع ہے۔ انہوں نے کہا ایرانی حملے کو پسپا کرنا امریکہ اور دیگر ممالک کے تعاون سے ہوا۔

انہوں نے مزید کہا کہ ہمارے پاس ایران کے اس شدید خطرے کے خلاف ایک اسٹریٹجک اتحاد بنانے کا موقع ہے۔ ایران ان میزائلوں کو جوہری دھماکہ خیز مواد سے لیس کرنے کی دھمکی دیتا ہے اور یہ ایک بہت سنگین خطرہ ہے۔ گیلنٹ نے زور دے کر کہا امریکہ، اسرائیل اور اتحادی ایرانی خطرے کا مقابلہ کرنے کے لیے شانہ بشانہ کھڑے ہیں۔ اسرائیلی فوج نے ایرانی حملے کا مقابلہ کرتے ہوئے متاثر کن نتائج حاصل کیے ہیں۔

دوسری طرف اسرائیلی دفاعی کابینہ کے وزیر بینی گینٹز نے اتوار کو کہا کہ جب مناسب وقت آئے گا تو ایران کی طرف سے کئے گئے میزائلوں اور ڈرونز سے حملے کی قیمت اسرائیل چکا دے گا۔ ہم ایک علاقائی اتحاد بنائیں گے اور ایران کو اپنے طے کردہ انداز اور وقت پر قیمت ادا کرنے پر مجبور کریں گے۔ انہوں نے مزید کہا کہ دنیا واضح طور پر اس خطرے کے پیش نظر اسرائیل کے ساتھ کندھے سے کندھا ملا کر کھڑی ہے۔ یہ ایک سٹریٹجک کامیابی ہے جسے ہمیں اسرائیل کی سلامتی کے لیے مضبوط کرنا چاہیے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں