" تم خونخوار اور ٹھگ ہو"اسرائیلی صحافی ’العربیہ‘ اینکر پربرس پڑا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیل کے ایک سرکردہ صحافی ایڈان رونن نے ’العربیہ‘ کے اینکر پرس طاہر برکہ کی طرف سے پوچھے گئے سوال کا سیدھا سادہ جواب دینے کے بجائے الٹا اسے کوسنا شروع کر دیا۔

العربیہ کے اینکر نے رونن سے ایران کے حملوں کے حوالے سے ممکنہ ردعمل پر تل ابیب اور واشنگٹن کے موقف میں اختلافات کی وجہ معلوم کی تو اسرائیلی صحافی نے چیخ کر کہا کہ’آپ لوگ ٹھگ اور خونخوار ہیں‘‘۔

رونن نے سوال چھوڑ کا جواب دینے کے بجائے "تل ابیب" کی اصطلاح کو اسرائیل کے دارالحکومت کے طور پر استعمال کرنے سے انکار کرتے ہوئے کہا کہ"میں تل ابیب کو اسرائیل کا دارالحکومت قرار دینا قبول نہیں کرتا ہوں"۔ انہوں نے مزید کہا کہ"میں آپ کو مشورہ دیتا ہوں کہ چیزوں کو غیر جانبداری سے نام دیں اور تل ابیب کے بجائے یروشلم کہیں‘‘۔

’’یہ میرا کام ہے تمہارا نہیں‘‘

العربیہ براڈکاسٹر نے جواب دیا کہ "یہ میرا کام ہے آپ کا نہیں۔ العربیہ اور عرب میڈیا میں ان شرائط کو ہمارے سیاسی مفادات اور اندرونی حالات کے مطابق بیان کرتے ہیں نہ کہ جیسا آپ سوچتے ہیں"۔

برکہ نے ایک بار پھر اسرائیلی صحافی کے سامنے ایران کو جواب دینے کے آپشنز کے بارے میں سوال کیا، لیکن اس نے جواب نہیں دیا اور پلٹ کر پھر کہا کہ کہا کہ "آپ تل ابیب کی اصطلاح استعمال کرتے ہیں اور میں 3000 سال پہلے کا دارالحکومت یروشلم استعمال کرتا ہوں"۔

"تم ٹھگ ہو"

اس کے بعد العربیہ براڈکاسٹر نے تبصرہ کرتے ہوئے کہا کہ "آپ کے ان الفاظ کو اقوام متحدہ نے مسترد کر دیا ہے"۔ انہوں نے مزید کہا کہ "ایسا لگتا ہے کہ آپ کے پاس سوال کا جواب نہیں ہے اور آپ مکالمے کو کسی اور طرف لے جا رہے ہیں یا آپ جواب دینے سے خوفزدہ ہیں‘‘۔

اسرائیلی صحافی نے بغیر کسی ہچکچاہٹ کے اپنے الزامات کو ہوا میں بلند کرتے ہوئےکہا کہ "تم ٹھگ ہو" پھر وہ انٹرویو چھوڑ کر چلا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں