امارات اور سلطنت عمان کے بعد سیلاب نے یمن میں تباہی مچا دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سلطنت عمان اور امارات میں آنے والا 75 سالہ تاریخ کا بدترین سیلاب یمن پہنچ گیا۔ یمن میں حضرموت اور مھرہ کے علاقوں میں شدید بارشیں ہوئیں اور ہر طرف پانی ہی پانی ہوگیا۔ سڑکیں بہ گئیں اور نالوں کا منظر پیش کرنے لگیں۔ سیلاب سے تباہی کی تصاویر اور ویڈیوز سوشل میڈیا پر گردش کرنے لگی ہیں۔ ویڈیوز میں دکھایا گیا ہے کہ حضرموت کے علاقوں کی گلیوں اور محلوں میں پانی چیزوں کو بہاتا لے جارہا ہے۔

Advertisement

موسمیاتی مراکز نے آنے والے گھنٹوں کے دوران طوفانی بارش سے متاثرہ علاقوں میں شدید سیلاب کے خطرے سے خبردار کیا ہے ۔ خاص طور پر مشرقی یمن میں حضرموت اور مھرہ گورنریوں میں خطرات شدید ہیں۔ نیشنل سینٹر فار میٹرولوجی اینڈ ارلی وارننگ نے نے بدھ کو انتباہ جاری کیا کہ شدید گرج چمک کے ساتھ طوفانی بارش صحراؤں اور بلند مقامات پر ہو رہی ہے۔ اسی طرح شبوہ، حضرموت اور مھرہ کے گورنریوں کے ساحلوں اور ساحلی علاقوں میں بھی بارش بھاری سطح تک پہنچ سکتی ہے۔ ریمہ، ذمار، اِب، تعز، ضالع، لحج ہائٹس، ابین، بیضاء اور مراب کی گورنروں کے کچھ حصوں میں بھی بارش خطرناک حد تک پہنچ سکتی ہے۔

میٹرولوجی سنٹر کے مطابق حجہ، محویت، عمران اور صنعا گورنریوں کے کچھ حصوں میں بھی بارشوں کی توقع ہے۔ پہاڑی علاقوں اور اندرونی سطح مرتفع پر دھند چھائی ہوئی ہے اور مشرقی ساحلوں پر سمندری طوفان ہے۔ مرکز نے نے ان علاقوں کے شہریوں سے اپیل کی ہے گرج چمک، تیز ہواؤں، ژالہ باری اور بارش کے دوران وادیوں اور سیلاب سے بننے والی ندیوں کی طرف جانے سے گریز کریں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں