العلا کیمل کپ کا دوسرا دن، سعودی عرب، متحدہ عرب امارات اور قطر کی کامیابی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

سعودی عرب، متحدہ عرب امارات اور قطر کو دوسرے سالانہ العلا کیمل کپ کے دوسرے دن بڑی فتوحات ملیں۔

بے موسمی گرم حالات میں منعقد ہونے والا جمعرات کا مقابلہ 5 کلومیٹر کے دو زمروں حقایق اور لقایا پر مشتمل تھا جس میں ہر ایک میں دو ریسز تھیں۔

سعودی عرب کے وزیرِ داخلہ شہزادہ عبدالعزیز بن سعود بن نائف نے پہلی حقایق ریس جیت لی جس پر شائقین بہت خوش ہوئے۔

شہزادے کا اونٹ جس کا نام مقابلے کی مناسبت سے العلا ہے، نے 5 منٹ 59.3 سیکنڈ میں ریس جیت لی۔ دن کی دوسری حقایق ریس میں اماراتی محمد الکتبی کی ملکیت والے اونٹ نے 5:57.8 کے وقت میں پہلی پوزیشن حاصل کی۔

اس دن کے انعامات کی کل رقم 6.83 ملین ڈالر کو دونوں زمروں میں برابر تقسیم کر دیا گیا۔

ہر ریس میں فاتحین کو 870,000، دوسرے نمبر پر آنے والوں کو 266,666، اور تیسرے نمبر پر آنے والوں کو 133,333 ڈالر ملے۔ انعامی رقم کا بقایا حصہ دوسرے شرکاء میں تقسیم کر دیا گیا۔

اس تقریب کا اہتمام سعودی کیمل ریسنگ فیڈریشن کے اشتراک سے رائل کمیشن برائے العلا نے العلا مومنٹس کیلنڈر کے حصے کے طور پر کیا تھا۔

2024 کا العلا کیمل کپ تماشائیوں اور شرکاء کو گذشتہ سال مارچ میں منعقدہ افتتاحی ایڈیشن کے بعد ایک نیا اور وسیع تر تجربہ پیش کرتا ہے۔

یہ سال اقوامِ متحدہ اور وزارتِ ثقافت کی طرف سے اونٹ کے سال کے طور پر نامزد کیا گیا ہے۔ یہ تقریب صحرائی جانور کو خراجِ عقیدت پیش کرتی ہے جو مملکت کے ورثے کے لیے بہت ضروری ہے۔

اس دن کا کل $6.83 ملین کا پرائز پول دونوں کیٹیگریز کے درمیان یکساں طور پر تقسیم کیا گیا تھا۔ (سپلائی شدہ)

ایس سی آر ایف کے ایگزیکٹیو ڈائریکٹر محمود البلاوی نے کہا، "العلا کیمل کپ نہ صرف خطے بلکہ پوری دنیا سے بہترین سواروں اور بہترین اونٹوں کو راغب کرتا ہے۔ العلا کیمل کپ کے لیے کوالیفیکیشن دانستہ طور پر چیلنجنگ رکھی گئی ہے اور اس شاندار مقابلے میں شرکت کی اہلیت حاصل کرنے کے لیے پورے سیزن میں فیڈریشن کے دائرہ اختیار میں اونٹوں کی 11 ریسز ہوتی ہیں۔"

البلاوی نے کہا کہ سعودی کیمل ریسنگ فیڈریشن کے پروگرام "سعودی عرب کے تمام گوشوں پر توجہ دیتے ہیں تاکہ اونٹوں کی دوڑ کے پسندیدہ کھیل کو ترقی دی جائے اور بہتر بنایا جا سکے۔ ملک بھر میں اونٹوں کی دوڑ کے 50 سے زیادہ ٹریکس ہیں بشمول ایلیٹ العلا مقام جہاں العلا کیمل کپ ہوتا ہے۔"

آر سی یو کے چیف سپورٹس آفیسر زیاد الصہیبانی نے شرکاء کی تعریف کی اور کہا: "العلا کیمل کپ مملکت کے ورثے اور ثقافت کی علامت کے طور پر اونٹوں کی دوڑ کی اہمیت ظاہر کرتا ہے۔"

جبکہ ثقافتی ورثے کے اس کھیل کی تاریخ ساتویں صدی سے ہے لیکن اس سال کے پروگرام میں ایک زیادہ عصری سیٹ اپ شامل ہے جو پورے خاندان کی ضروریات پوری کرتا ہے۔ اونٹ کی سیلفیز لینے، اونٹ کی سمودی کے سامپل یا مقامی فنکاروں کی لائیو لوک موسیقی سننے کے مواقع موجود ہیں۔

حتمی ریسز ہفتہ کو ہوں گی۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں