جنین میں مزید دو فلسطینی نوجوان اسرائیلی فائرنگ سے ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

اسرائیلی قابض فوج نے مقبوضہ مغربی کنارے میں دو فلسطینی شہریوں کو قتل کر دیا ہے۔ اسرائیلی فوج کی یہ کارروائی جنین کے پناہ گزین کیمپ میں ہفتے کے روز کی گئی ہے۔ اسرائیلی اور فلسطینی میڈیا دونوں نے اسے رپورٹ کیا ہے۔

اسرائیلی فوج کے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ ایک گاڑی میں موجود عسکریت پسندوں نے جنین کے داخلی راستے پر سلیم فوجی چوکی پر تعینات فوجیوں پر فائرنگ کی تھی۔ جوابی کارروائی کے نتیجے میں دو عسکریت پسندوں کو ہلاک کیا ہے۔

فلسطینی خبر رساں ادارے 'وفا' نے بتایا ہے کہ اسرائیلی فوج نے 22 سالہ مصطفیٰ سلطان احمد اور 21 سالہ احمد محمد شواہنا کو فوجی چوکی پر گولی مار کر ہلاک کیا ہے۔ ان دو فلسطینی نوجوانوں کے علاوہ مزید دو فلسطینی زخمی بھی ہوئے ہیں۔ 'وفا' نے رپورٹ کیا ہے کہ ان دنووں فلسطینیوں کی لاشیں اسرائیلی فوج کے قبضے میں ہیں۔

خیال رہے اسرائیلی فوج جنین اور اس سے ملحقہ پناہ گزین کیمپ میں آئے روز چھاپے مارتی ہے۔ 7 اکتوبر سے شروع ہونے والی اسرائیل حماس جنگ میں اسرائیلی فوج کی سرگرمیاں مغربی کنارے میں تیز ہو چکی ہیں۔ وزارت صحت کے مطابق 7 اکتوبر سے اب تک مغربی کنارے میں 490 فلسطینی اسرائیلی فوج کے ہاتھوں ہلاک ہو چکے ہیں۔

وزارت صحت کا کہنا ہے کہ اسرائیلی بمباری کے نتیجے میں اب تک 34356 فلسطینی ہلاک ہو چکے ہیں۔ ہلاک ہونے والوں میں زیادہ تعداد فلسطینی بچوں اور خواتین کی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں