اقوام متحدہ کی انسداد دہشت گردی کے لیے سعودی عرب کی مساعی کی تحسین

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اقوام متحدہ نے دہشت گردی کے خلاف جنگ میں سعودی عرب کی خدمات اور قربانیوں کو سراہا ہے۔

کل منگل کو سعودی عرب کے دارالحکومت ریاض میں "دہشت گردی کی مالی معاونت سے نمٹنے کے لیے علاقائی صلاحیت سازی ورکشاپ" کا انعقاد کیا گیا۔ اس کا اہتمام نائف عرب یونیورسٹی برائے سکیورٹی سائنسز کے ہیڈ کوارٹر میں کیا گیا۔ اس اجلاس میں عرب وزرائے داخلہ کی کونسل کے جنرل سیکریٹریٹ نے تعاون فراہم کیا جب کہ اقوام متحدہ کے انسداد دہشت گردی کا دفتر نے دہشت گردی کی روک تھام کے لیے سعودی عرب کی خدمات کو سراہا۔

دہشت گردوں کی مالی معاونت سے نمٹنے کے لیے علاقائی صلاحیت سازی کی ورکشاپ
دہشت گردوں کی مالی معاونت سے نمٹنے کے لیے علاقائی صلاحیت سازی کی ورکشاپ

دہشت گردی سے نمٹنے کے لیے حکمت عملی

ورکشاپ کے افتتاح کے موقع پر یونیورسٹی کے نائب صدر برائے خارجہ تعلقات خالد الحرفش نے عرب وزرائے داخلہ کی کونسل، اس کے مختلف ڈھانچے اور ایجنسیوں کے ساتھ مل کر دہشت گردی کی تمام شکلوں اور ذرائع سے مقابلہ کرنے میں دلچسپی پر زور دیا۔ انہوں نے کہا کہ اس میدان میں کی جانے والی کوششوں نے دہشت گردی اور انتہا پسندی کے خطرے سے لاحق سرحد پار سے جاری چیلنجز کو کم کیا ہے۔ انہوں نے تمام ممالک کے استحکام اور سلامتی کو نشانہ بنانے اور ان کے سیاسی، اقتصادی اور سماجی نظام کو لاحق خطرات کی روک تھام کے لیے جامع اسٹریٹجک منصوبہ بندی اور علاقائی کوششوں کی ضرورت پر زور دیا۔ ان کا کہنا تھا کہ دہشت گردوں کے مالی سوتوں کو خشک کرنے کے لیے تمام ممالک کو ایک دوسرے کے ساتھ تعاون کرنا ہوگا۔

دہشت گردوں کی مالی معاونت سے نمٹنے کے لیے علاقائی صلاحیت سازی کی ورکشاپ
دہشت گردوں کی مالی معاونت سے نمٹنے کے لیے علاقائی صلاحیت سازی کی ورکشاپ

دہشت گردی کے جرائم سے نمٹنا

یونیورسٹی کے نائب صدر برائے بیرونی تعلقات نے نشاندہی کی کہ یونیورسٹی نے اقوام متحدہ کے انسداد دہشت گردی کے دفتر کے ساتھ مفاہمت اور تعاون کی یادداشت پر دستخط کیے ہیں جو قومی، علاقائی تعمیر کے لیے بین الاقوامی برادری کی کوششوں کی حمایت میں مشترکہ تعاون کو فروغ دینے کے لیے ایک اہم اور کامیاب ماڈل ہے۔اس سے دہشت گردی کے جرائم کا ان کی مختلف شکلوں میں مقابلہ کرنے کی بین الاقوامی صلاحیتوں کو بہتربنانے میں مدد ملے گی۔ یونیورسٹی کو عرب وزرائے داخلہ کی کونسل کی سائنسی باڈی کے طور پر اور اپنے تعلیمی، تربیتی، تحقیقی اور سائنسی پروگراموں اور سائنسی سرگرمیوں کے ذریعے عرب سکیورٹی کی حکمت عملیوں اور منصوبوں کو نافذ کرنے کی ذمہ داری سونپی گئی ہے۔

دہشت گردوں کی مالی معاونت سے نمٹنے کے لیے علاقائی صلاحیت سازی کی ورکشاپ
دہشت گردوں کی مالی معاونت سے نمٹنے کے لیے علاقائی صلاحیت سازی کی ورکشاپ

اس موقعے پر اقوام متحدہ کے انسداد دہشت گردی کے دفتر میں پروگراموں کے ڈائریکٹرعزالدین سلیمان نے سعودی عرب کی طرف سےانسداد دہشت گردی اور ترقی کے پروگرام کے کے لیے فراہم کی جانے والی تعمیری حمایت اور فراخدلانہ عطیات کی تعریف کی۔ انہوں نے کہا کہ سعودی عرب نے دہشت گردی کی روک تھام کے لیے موثر اور قابل قدر خدمات انجام دی ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں