حماس نے جنگ بندی تجویز سے متعلق ثالثوں کو اپنی رضا مندی سے آگاہ کر دیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

فلسطینی تحریک حماس نے مصر اور قطر کی جانب سے غزہ میں جنگ بندی کی تجویز قبول کر لی ہے۔

برطانوی خبر رساں ادارے رائٹر کے مطابق حماس کی جانب سے جاری کردہ بیان میں کہا گیا ہے کہ اس کے سربراہ اسماعیل ہنیہ نے قطر کے وزیر اعظم الشيخ محمد بن عبد الرحمن آل ثانی اور مصر کے انٹیلیجنس چیف عباس كامل کو آگاہ کر دیا ہے کہ حماس نے ان کی جنگ بندی کی تجویز قبول کر لی ہے۔

مصری ذرائع ابلاغ نے اعلیٰ سرکاری عہدیداروں کے حوالے سے بتایا ہے کہ اسرائیل اور حماس کے درمیان کشیدگی روکنے کی کوششیں کامیابی سے ہم کنار ہوئی ہیں۔

اسرائیل اور حماس کے درمیان فائر بندی معاہدہ تین مراحل پر مشتمل ہو گا جس میں قیدیوں اور یرغمالیوں کا باہمی تبادلہ اور انسانی بنیادوں پر جنگ بندی نمایاں ہیں۔

قبل ازیں حماس نے کہا تھا کہ اس کا ایک وفد ہفتے کو غزہ میں فائر بندی مذاکرات کو دوبارہ شروع کرنے کے لیے قاہرہ گیا ہے۔ غزہ میں جنگ بندی کے لیے مذاکرات ہفتے کو مصر کے شہر قاہرہ میں ہوئے تھے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں