سعودی اور امریکی مسلح افواج کی مشترکہ جنگی مشقوں " فیئرس فیوری 24" کا آغاز

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

سعودی عرب اور امریکہ کی مسلح افواج پر مشتمل مشقیں "فیئرس فیوری24" کے عنوان سے بحیرہ احمر کے ساحل پر واقع تجارتی بندرگاہ ینبع میں آپریشن کے علاقے میں شروع کی گئی ہیں۔ ان مشقوں میں دونوں ممالک کی بحریہ کے دستے حصہ لےرہے ہیں۔

مشقوں کا آغاز مغربی ریجن کے کمانڈر میجر جنرل پائلٹ احمد الدبیس اور سعودی مسلح افواج کے کئی اعلیٰ افسران کی موجودگی میں ہوا جب کہ امریکی سینٹرل کمانڈ کے ڈائریکٹر بریگیڈیئر جنرل رچرڈ جے کوارک اور امریکی فوج کے کئی اعلیٰ حکام نے شرکت کی۔

جنگی مشقوں کا ایک منظر
جنگی مشقوں کا ایک منظر

مشقوں کے کمانڈر بریگیڈیئر جنرل عقاب المطیری نے وضاحت کی کہ مشقیں متعدد سرکاری اداروں کی شرکت کے ساتھ کئی مراحل میں کی جائیں گی۔ ان کا مقصد کوآرڈینیشن اورعسکری شراکت داری کو بڑھانا، تجربات کا تبادلہ کرنا، مملکت میں فوجی اڈوں اور سڑکوں کے نیٹ ورک کے استعمال میں تربیت کی سطح کو بڑھانا، اس کے علاوہ ایسی مشقوں کا نفاذ کرنا شامل ہے جس میں سول اور فوجی اداروں کو مل کر کام کرنے کا تجربہ فراہم کیا جائے۔

جنگی مشقوں کا منظر
جنگی مشقوں کا منظر

انہوں نے زور دے کر کہا کہ مشقوں میں نقل و حمل اور سپلائی کے آپریشنز اور لائیو گولہ بارود کی شوٹنگ سے متعلق بہت سے مفروضے اور مشقیں شامل ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں