سعودی عرب میں اقامہ اور ورک ریگولیشنزکی خلاف ورزیوں پر19 ہزار غیرملکی گرفتار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کے تمام خطوں میں اقامہ، ورک پرمٹ اور سرحدی سلامتی کے ضوابط کی خلاف ورزی کرنے والوں کی نگرانی اور ان پر قابو پانے کے لیے مشترکہ سکیورٹی فیلڈ مہم کے ذریعے خلاف ورزی کرنے والے پکڑے گئے غیرملکی باشندوں کی تعداد 19,710 تک پہنچ گئی۔ ان میں ریزیڈنسی سسٹم کی 12,961 خلاف ورزی کرنے والے افراد شامل ہیں۔ 4,177 کو سرحد کی خلاف ورزی کے الزام میں گرفتار کیا گیا جب کہ سکیورٹی سسٹم اور لیبر سسٹم کی خلاف ورزی پر 2,572 لوگوں کو گرفتار کیا گیا۔ یہ گرفتاریاں دو مئی 2024ء تک کی ہیں۔

جب کہ مشترکہ فیلڈ مہمات کے ذریعے مملکت میں داخل ہونے کی کوشش کے دوران گرفتار ہونے والوں کی تعداد 979 کو حوالات میں بند کیا گیا۔ ان میں سے 43 فی صد یمنی، 54 فی صد ایتھوپیا کے شہری اور 03 فی صد دیگر قومیتوں کے لوگ شامل ہیں۔

حالیہ فیلڈ مہمات کے دوران رہائش، کام اور سرحدی حفاظتی ضوابط کی خلاف ورزی کرنے والوں کو نقل و حمل، پناہ دینے اور ملازمت دینے میں ملوث 12 افراد کو گرفتار کیا گیا۔ ضوابط کی خلاف ورزی کے دوران مجموعی طور پر49,407 افراد کے کوائف چیک کیے گئے جن میں 46,342 مرد اور 3,065 خواتین شامل ہیں۔

اس دوران 40,391 خلاف ورزی کرنے والوں کو سفری دستاویزات حاصل کرنے کے لیے ان کے سفارتی مشنوں کو ریفر کیا گیا جب کہ اس نے 3,016 خلاف ورزی کرنے والوں کو سفری ریزرویشن مکمل کرنے کے لیے ریفر کیا۔13,383 خلاف ورزی کرنے والوں کو ملک بدر کیا گیا۔
خیال رہے کہ سعودی عرب میں غیرقانونی طور پر داخل ہونے والے غیرملکیوں کو پناہ دینے، کام پر رکھنے، نقل وحمل میں اس کی مدد کرنے والے کو پندرہ سال قید اور ایک ملین ریال تک جرمانہ اور املاک ضبطی کی سزائوں کی سفارش کی جاتی ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں