اسرائیل کی سلامتی کےلیے ہمارا عزم پختہ ہے:بائیڈن کی اپنےاسرائیلی ہم منصب کویقین دہانی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

حالیہ ہفتوں میں امریکی صدر کی جانب سے اسرائیلی فوج کے غزہ کی پٹی کے انتہائی جنوب میں واقع شہر رفح میں گھسنے کی صورت میں ہتھیاروں کی ترسیل معطل کرنے کی دھمکی اور اس کے نتیجے میں کشیدگی کے جلو میں امریکی صدر جوبائیڈن نے اپنے اسرائیلی ہم منصب اسحاق ہرزوگ کو نیک تمنائوں کا پیغام بھیجا ہے۔

اخبار'ٹائمزآ اسرائیل' کی رپورٹ کے مطابق امریکی صدر نے اپنے اسرائیلی ہم منصب کو ایک مکتوب ارسال کیا ہے جس میں انہوں نے لکھا کہ ہے کہ "انہیں اسرائیل کے ساتھ پائیدار تعلقات پر فخر ہے"۔

انہوں نے گذشتہ 7 اکتوبر کو حماس تحریک کی طرف سے غزہ کی پٹی میں اسرائیلی فوجی اڈوں اور بستیوں پر اچانک کیے گئے حملے کا حوالہ دیتے ہوئے کہا کہ "گذشتہ سال بہت تکلیف دہ تھا، کیونکہ7 اکتوبر2023ء کو اسرائیل پر بدترین حملہ ہوا تھا"۔

امریکی صدر کا کہنا تھا کہ "اسرائیل کی سلامتی کے لیے امریکہ کا عزم پختہ ہے"۔

حماس کو ختم کیے بغیرحملہ "افراتفری" کا بیج بوئے گا۔

قابل ذکر ہے کہ امریکی وزیر خارجہ انٹونی بلنکن نے اتوار کو خبردار کیا تھا کہ رفح پر بڑے پیمانے پر اسرائیلی حملہ حماس کو ختم کیے بغیر ’افراتفری‘ کا بیج بو دے گا۔

امریکی 'این بی سی' ٹیلی ویژن سٹیشن کو انٹرویو دیتے ہوئے بلنکن نے کہا کہ موجودہ منصوبہ جس پر اسرائیل رفح میں کارراوئی کے لیے غور کر رہا ہے مسئلہ حل کیے بغیر شہریوں کو بڑے پیمانے پر نقصان پہنچا سکتا ہے۔

انہوں نے کہا کہ "اگر رفح پرحملہ ہوتا ہے تب بھی ہزاروں مسلح حماس کے ارکان باقی رہیں گے"۔۔ انہوں نے مزید کہا کہ رفح میں اسرائیلی حملے کے نتیجے میں "افراتفری" ہوسکتی ہے جب کہ حماس کو مکمل ختم کرنے کا پلان بھی ناکام ہوسکتا ہے"۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں