اسرائیل اور حزب اللہ کے درمیان میزائل حملے، ایک اسرائیلی اور دو لبنانی ہلاک

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

لبنان کی طرف سے اسرائیل میں داغے گئے میزائل سے ایک اسرائیلی ہلاک ہو گیا ہے۔ یہ میزائل منگل کے روز داغا گیا ۔ اسرائیل نے حزب اللہ کے اس راکٹ حملے اور اس سے ہونے والی ایک ہلاکت کی تصدیق کی ہے۔

اسرائیلی فوج کی طرف سے جاری کیے گئے بیان میں کہا گیا ہے کہ منگل کے روز لبنان سے میزائل حملے کے نتیجے میں ایک عام شہری ہلاک جبکہ پانچ اسرائیلی فوجی زخمی ہو گئے۔

اسرائیلی فوج کے ترجمان رئیر ایڈمرل ڈینئیل ہگاری نے ایک ٹی وی پر دکھائی گئی بریفنگ میں بتایا ہے یہ حملہ ٹینک شکن میزائل سے کیا گیا ۔ جس کی زد میں آکر کیبوتز کمیونٹی کا ایک شخص ہلاک ہو گیا۔

اسرائیلی فوجی بیان میں مزید کہا گیا ہے کہ لبنانی سرحد کی جانب سے اسرائیل کی طرف متعدد ٹینک شکن میزائل فائر کیے گئے تھے۔ انہی میزائلوں کے حملے میں چار اسرئیلی فوجی زخمی ہو ئے۔ جن میں سے ایک نسپتا زیادہ زخمی ہے۔

عینی شاہدوں کے مطابق جس اسرائیلی شخص کی اس حملے میں ہلاکت ہوئی ہے وہ گاؤں میں مہمان کے طور پر گاؤں کے دورے پر آیا تھا۔

فوجی ترجمان ہگاری نے کہا 'منگل ہی کے روز اس دوران اسرائیلی فوج کی طرف سے بھی حزب اللہ کےدرجنوں ٹھکانوں کو نشانہ بنایا گیا۔

لبنانی سرکاری خبر رساں ادارے کی رپورٹ کے مطابق منگل کی شام کو ایک گاڑی پر اسرائیلی میزائل لگنے سے دو افراد ہلاک ہوگئے ہیں۔

ایک ذریعے نے'العربیہ' کو بتایا ہے کہ لبنانی علاقے میں گاڑی پر ہونے والے حملے میں اسی علاقے کے لیے حزب اللہ کا ایریا کمانڈر تھا۔

سات اکتوبر2023 سے اب تک اسرائیل میذائل حملوں ور بمباری سے 410 لبنانی ہلاک ہوچکے ہیں ۔ جن میں 79 عام لبنانی شہری ہیں جبکہ باقی حزب للہ کے اہلکار شامل ہیں۔ دونوں طرف کی سرحد کے نزدیک رہنے والے ہزاروں شہری نقل مکانی پر بھی مجبور ہوئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں