بحرین میں عرب سربراہی اجلاس کی تیاریاں مکمل، مسئلہ فلسطین ایجنڈے میں سرفہرست

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

کل جمعرات کو بحرین کی میزبانی میں عرب لیگ کے 33 واں سربراہ اجلاس منعقد ہو رہا ہے۔ منامہ میں ہونے والا یہ اجلاس کئی اعتبار سے نہایت اہمیت کا حامل ہے جس میں مسئلہ فلسطین، خطے کی سلامتی اور معاشی چیلنجز پر بات کی جائے گی۔

یہ سربراہی اجلاس غیر معمولی حالات میں منعقد ہو رہا ہے کیونکہ عرب رہ نماؤں کی بحث کی میز پر پیش کیے گئے ایجنڈے کے مسودے میں 8 اہم موضوعات شامل ہیں جن میں سیاسی، اقتصادی، سماجی، ثقافتی، میڈیا اور سکیورٹی جیسے اہم شعبے شامل ہیں۔

اجلاس کے ایجنڈے کے 70 فی صد نکات سیاسی، غزہ سب سے سلگتا ایشو

عرب رہ نماؤں کو پیش کی گئی فائلوں میں سے تقریباً 70 فیصد سیاسی امور شامل ہوں گے۔ اجلاس میں غزہ کی پٹی میں جنگ سب سے اہم موضوع ہوگا جسے عرب لیگ ایک انسانی المیہ قرار دے چکی ہے۔

اجلاس میں غزہ میں جاری جنگ کے خطے کی سلامتی پر مرتب ہونے والے اثرات، مسئلہ فلسطین کے مستقبل اور غزہ میں اسرائیلی خلاف ورزیوں پرغور کیا جائے گا۔ اس حوالے سے عرب لیگ کے سیکرٹری جنرل ایک رپورٹ بھی پیش کریں گے جس میں مسئلہ فلسطین اور غزہ کی پٹی کی صورت حال پر بریفنگ دی جائے گی۔

دوسرے آئٹم میں کئی موضوعات شامل ہیں جن میں مسئلہ فلسطین کی سیاسی پیش رفت اور عرب اسرائیل تنازعہ، عرب امن اقدام کو فعال کرنا، یروشلم شہر میں اسرائیلی آباد کاری اور خلاف ورزیاں، ریاست فلسطین کے بجٹ کی حمایت اور فلسطینی عوام کی ثابت قدمی، فلسطینی علاقوں میں ترقی کے علاوہ، آبادکاری کی پیش رفت، نسلی دیوار، قیدیوں اور پناہ گزینوں اور اقوام متحدہ کی امدادی ایجنسی'اونروا' کے حالات اور فلسطینی پناہ گزینوں کی امداد اور شامی گولان فائل پر بات چیت کی جائے گی۔

بحرین پہلی بار عرب سربراہی اجلاس کی میزبانی کرنے کی تیاری کر رہا ہے اور غزہ اولین ترجیح ہے۔

قومی سلامتی

عرب سربراہی اجلاس کے ایجنڈے کے مسودے میں عرب امور اور قومی سلامتی سے متعلق ایک آئٹم بھی شامل ہے، جس میں لبنان کے ساتھ یکجہتی، شام کی صورت حال میں پیش رفت، سوڈان میں امن اور ترقی کی حمایت، لیبیا کی صورت حال میں پیشرفت اوریمن سمیت کئی موضوعات شامل ہیں۔

اس آئٹم میں صومالیہ اور یونائیٹڈ ریپبلک آف کوموروس کے لیے حمایت شامل ہے۔ جبوتی-ایریٹریا سرحدی تنازعہ، النہضہ ڈیم کا مسئلہ جو ایک طرمصر اور دوری طرف سوڈان اورایتھوپیا جیسے ممالک کا اختلاف چلا آ رہا ہے۔

عرب معاملات میں ایران اور ترکیہ کی مداخلت کی فائل بھی سربراہی اجلاس کے ایجنڈے کے مسودے میں شامل ہے۔

اقتصادی امور

عرب سربراہ اجلاس کا پانچواں 'آئٹم' اقتصادی، سماجی، میڈیا اور قانونی امور کی فائل پر بحث کرنا ہے۔ اس میں موسمیاتی تبدیلی کے مسائل کے حل کے لیے عرب ممالک کی مساعی، انسانی حقوق کے لیے ترمیم شدہ عرب حکمت عملی کا جائزہ، مشترکہ عرب اقدام پر تبادلہ خیال، بحرین سربراہی اجلاس میں اقتصادی اور سماجی کونسل کی طرف سے پیش کردہ مسودہ قراردادوں کے علاوہ دہشت گردی سے نمٹنے، عرب قومی سلامتی کو برقرار رکھنے جیسے امور پر غور کیا جائے گا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں