حماس کا مذاکرات کے نئے دور میں فریقین کی شرکت سے متعلق لاعلمی کا اظہار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

اسرائیل کی اس پالیسی کہ بمباری کرتے جاؤ اور فلسطینیوں کی ہلاکتوں میں اضافے کے ساتھ ساتھ ثالثوں کے ذریعہ سے مذاکرات کی کوشش کو بھی اپنی شرائط پر جاری رکھنے کوشش جتاتے رہو۔ اسرائیل کی اس حکمت عملی کے رد عمل میں حماس نے بھی کہہ دیا ہے کہ اسے مذاکرات میں واپس آنے کی کوئی تجویز موصول نہیں ہوئی ہے۔

اس سے قبل ذرائع نے انکشاف کیا تھا اسرائیل کی جانب سے قطر، مصر اور امریکہ کو پیر کے روز، غزہ میں قید یرغمالیوں کی رہائی کے ممکنہ معاہدے کی خاطر ایک سرکاری تحریری اور تازہ ترین تجویز پیش کی گئی ہے۔ اس تجویز میں عارضی جنگ بندی کے لیے کہا گیا ہے۔ فلسطینی تحریک حماس نے کہا ہے کہ اسے ابھی تک مذاکرات میں واپس آنے کی کوئی نئی تجویز نہیں ملی۔

فلسطینی مزاحمتی گروپ حماس کے سیاسی بیورو کے رکن غازی حماد نے ’العربیہ‘ کو انٹرویو کے دوران کہا 'اسرائیل مذاکرات کی نہیں فلسطینیوں کی نسل کشی کی طرف مزید بڑھ رہا ہے۔ '

غازی حماد نے مزید کہا 'اسرائیل مذاکرات کے راستے پر نہیں بلکہ مخالف سمت میں جا رہا ہے۔ جس سے ظاہر ہوتا ہے کہ وہ جنگ بندی کے لیے سنجیدہ نہیں ہے' ۔

انہوں نے کہا ہم مذاکرات کے لیے ایسا مسودہ چاہتے ہیں جو غزہ سے اسرائیل کے مکمل انخلاء کی ضمانت دے، ہم اس طرح سے اتفاق کرلیں گے۔' واضح رہے پچھلے دنوں ایک تجویز، مرکزی ثالث قطر اور مصر کو پیش کی گئی تھی۔

امریکی اور اسرائیلی حکام نے اطلاع دی ہے کہ جمعہ کو پیرس میں سی آئی اے کے ڈائریکٹر بل برنز، اسرائیلی موساد کے ڈائریکٹر اور قطری وزیر اعظم کے درمیان ہونے والی ملاقات میں غزہ میں قیدیوں سے متعلق مذاکرات کی بحالی کی جانب پیش رفت ہوئی تھی۔

تازہ ترین اسرائیلی تجویز میں زندہ قیدیوں کی تعداد کے حوالے سے لچکدار ہونے کی آمادگی بھی شامل ہے۔ ان قیدیوں کو معاہدے سے پہلے معاہدے کے پہلے انسانی بنیادوں پر رہا کیا جائے گا۔

حماس غزہ سے اسرائیلی فوج کی واپسی میں رفح سے فوری انخلا کا بھی خواہش مند ہے۔ دوسری طرف سے اسرائیل نے غزہ میں پائیدار امن کے لیے حماس کے مطالبے پر بات کرنے کی آمادگی ظاہر کی گئی ہے۔

ذرائع کے مطابق یہ ایک نئی بات ہے اور یہ سنجیدہ پیش رفت ہو سکتی ہے۔ اگرچہ رفح پر اسرائیلی حملے اور پناہ گزینوں کو براہ راست نشانہ کے واقعے نے معاملہ مزید پیچیدہ کر دیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں