مغربی کنارے میں اسرائیلی فائرنگ سے دو فلسطینی نوجوان ہلاک: حکام

ایک نوجوان کو سر میں اور دوسرے کو سینے میں گولی لگی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

فلسطین کی وزارتِ صحت نے اتوار کے روز کہا کہ مقبوضہ مغربی کنارے میں اسرائیلی فائرنگ سے دو فلسطینی نوجوان جاں بحق ہو گئے۔

اسرائیلی فوج نے ہلاکتوں کی تصدیق نہیں کی لیکن کہا کہ دو مشتبہ افراد نے ایک مقامی کمیونٹی کی طرف دھماکا خیز مواد پھینکا جس سے شہریوں کو خطرہ لاحق ہو گیا اور فوجیوں نے براہِ راست فائرنگ سے اس کا جواب دیا۔

فوج نے ایک بیان میں کہا، "ہلاک شدگان کی شناخت ہو گئی۔"

فلسطینی وزارتِ صحت نے بتایا کہ مغربی کنارے کے شہر اریحا کے قریب عقبۃ جبر پناہ گزین کیمپ کے مغرب میں ایک 16 اور ایک 17 سالہ نوجوان ہلاک ہو گئے۔

فلسطینی میڈیا نے کہا کہ طبی ٹیموں کو زخمیوں میں سے ایک تک پہنچنے سے روک دیا گیا اور دوسرا اتوار کو یروشلم کے ایک ہسپتال میں زخموں کی تاب نہ لاتے ہوئے چل بسا۔ فلسطینی وزارتِ صحت نے بتایا کہ ایک نوجوان کو سر میں اور دوسرے کو سینے میں گولی لگی۔

فلسطینی غزہ کے ساتھ ساتھ مقبوضہ مغربی کنارے کو مستقبل کی آزاد ریاست کے مرکز کے طور پر چاہتے ہیں۔ گذشتہ سال غزہ میں جنگ کے آغاز کے بعد سے یہاں تشدد میں اضافہ اور اسرائیلی سکیورٹی فورسز کی طرف سے ایک بڑا کریک ڈاؤن دیکھنے میں آیا ہے جس میں ہزاروں گرفتاریاں کی گئیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں