حج پرمٹ کے بغیر موجود افراد سے مکہ خالی کرا لیا گیا : سعودی سیکیورٹی حکام

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

سعودی عرب کی سیکیورٹی فورسز نے لاکھوں غیر رجسٹرڈ زائرین اور عازمین حج سے مکہ کو خالی کرا لیا ہے تاکہ اسی ہفتے فریضہ حج کی سرگرمیوں کا باضابطہ آغاز ہونے سے پہلے سیکیورٹی انتظامات مکمل ہو سکیں۔

سعودی سیکیورٹی حکام کے لیے اس موقع پر ہجوم کو کنٹرول کرنا ہر سال ایک اہم اور حساس معاملہ ہوتا ہے۔کہ لاکھوں مقامی افراد کے علاوہ بہت بڑی تعداد می دنیابھر سے عازمین حج یہاں پہنچتے ہیں۔ یہ دنیا میں سب سے بڑا مذہبی اجتماع ہوتا ہے۔

واضح رہے ادائیگی حج اسلام کے پانچ ارکان میں سے ایک اہم رکن ہے۔ تاہم یہ زندگی میں صرف ایک بار ان مسلمانوں پر فرض ہے جنہیں اس کی استتطاعت حاصل ہو۔

واضح رہے پچھلے سال آٹھارہ لاکھ سے زیادہ مسلمانوں نے فریضہ حج ادا کیا تھا۔

حالیہ دنوں میں مقدس شہر مکہ میں آئے ، سعودی پریس ایجنسی کے مطابق جن میں 153998 غیر ملکی بھی شامل تھے جو دینا کے مختلف ملکوں سے سیاحتی ویزے پر آئے تھے۔ مگر ان کے پاس حج ویزا موجود نہ تھا

سیکورٹی حکام نے ایسے 171587 افراد کو مکہ سے باہر بھیج دیا ہے ۔جو سعودی عرب میں ہی مقیم ہیں مگر مکہ کے رہنے والے نہیں ہیں اور ان کے پاس حج پرمٹ نہیں ہے۔

ہفتے کے روز مکہ میں سعودی حج حکام کے مطابق 14 جون سے شروع ہونے والے ایام حج میں فریضہ حج ادا کرنے کے لیے اب تک 13 لاکھ سے زیادہ عازمین حج سعودی عرب پہنچ چکے گئے تھے۔ عازمین حج کی آمد کا یہ سلسلہ ابھی جاری ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں