.

نوشہرہ زیارت کاکا صاحب کے باہر بم دھماکا، 3 افراد ہلاک، 25 زخمی

بم بائیسکل کے ساتھ باندھا گیا تھا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
پاکستان کے شمال مغربی سرحدی صوبہ خیبر پختونخوا کے شہر نوشہرہ کے نواح میں واقع ایک درگاہ زیارت کاکا صاحب کے باہر بم دھماکے میں تین افراد جاں بحق اور پچیس زخمی ہو گئے ہیں۔

نوشہرہ کے پولیس حکام کے مطابق زیارت کاکا صاحب کے مرکزی دروازے کے سامنے ریموٹ کنٹرول سے بم دھماکا کیا گیا ہے۔ بم تین سے پانچ کلو وزنی تھا اور اسے ایک بائیسکل پر فروٹ میں چھپا کر باندھا گیا تھا۔

واقعہ کے وقت عید کے موقع پر مشہور پشتون صوفی بزرگ قسطیر گل کی درگاہ پر بڑی تعداد میں لوگ موجود تھے۔ بم دھماکے کے بعد سکیورٹی فورسز نے علاقے کو گھیر لیا اور زخمیوں کو مقامی اسپتالوں میں منتقل کر دیا گیا ہے۔ پچیس زخمیوں میں سے پانچ کی حالت تشویش ناک بتائی گئی ہے۔

صوبہ خیبر پختونخوا کے وزیر اطلاعات میاں افتخار حسین نے بم دھماکے اور اس میں ہلاکتوں کی تصدیق کی ہے۔ فوری طور پر کسی گروپ نے دھماکے کی ذمے داری قبول نہیں کی لیکن ماضی میں پاکستان کے قبائلی علاقوں سے تعلق رکھنے والے جنگجوؤں پر بڑے شہروں میں مساجد اور صوفیہ کے مزارات کو بھی نشانہ بنانے کے الزامات عاید کیے جاتے رہے ہیں۔