.

پاکستانی نژاد امریکی نوجوان نے ’پلٹزر پرائز‘ جیت لیا

ایاد اختر کو یہ ایوارڈ ان کے ایک ڈرامے پر دیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

صحافت میں نمایاں خدمات پر دیئے جانے والا سال 2013ء کا مؤقر پلٹزر ایوارڈ پاکستانی نژاد امریکی ایاد اختر کو دیا گیا ہے۔

امریکی نشریاتی ادارے کے مطابق ایاد اختر کو یہ انعام ڈرامہ کے شعبے میں ان کے تحریر کردہ ایک ڈرامے پر دیا جس کے بارے میں ایاد کا کہنا ہے کہ یہ ان کے لیے ’’حیران کن‘‘ اطلاع تھی۔

یہ ڈرامہ ایک پاکستانی نژاد امریکی وکیل کے بارے میں جو دو جوڑوں کو اپنے ہاں اعشایئے پر مدعو کرتا ہے۔ دعوت کے دوران اسلام اور یہودی ثقافت، قرآن اور تلمود اور دیگر مذہبی و سیاسی معاملات پر جذباتی گفتگو ہوتی ہے۔

پلٹزر پرائز ایک متعبر امریکی ایوارڈ ہے جو صحافت، ادب اور موسیقی کے شعبوں میں نمایاں کارکردگی پر دیا جاتا ہے۔

بیالیس سالہ ایاد امریکی شہر نیویارک میں پیدا ہوئے تھے۔ ان کے والدین پاکستان سے امریکا آ کر آباد ہوئے تھے۔ ایاد وسکونسن کے علاقے میں پلے بڑھے جب کہ وہ براؤن یونیورسٹی اور کولمبیا یونیورسٹی کے فلم اسکول سے فارغ التحصیل ہیں۔