تحریک انصاف خیبر پختونخواہ میں حکومت بنائے گی

انتخابی نتائج کے ردِعمل میں عمران خان آج بیان دیں گے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

عمران خان کی جماعت پاکستان تحریک انصاف [پی ٹی آئی] نے عام انتخابات میں شکست تسلیم کر لی ہے، تاہم دہشت گردی کے شکار شمالی مغربی صوبہ خیبر پختونخواہ میں حکومت بنانے کا اعلان کیا ہے۔

پی ٹی آئی کے ایک سینئر رہنما اسد عمر کا کہنا ہے: ’’تحریکِ انصاف کے لیے یہ ایک بڑا دِن ہے، ایک سنہرا دِن۔ ایک ایسی پارٹی جس کا پارلیمنٹ (قومی اسمبلی) میں کوئی وجود نہیں تھی، وہ دوسری بڑی جماعت بن کر ابھری ہے اور خیبر پختونخواہ میں بڑی جماعت بن کر سامنے آئی ہے، جہاں انشااللہ ہم حکومت بنائیں گے۔’’

خیبر پختونخواہ میں پی ٹی آئی کے فاتح امیدوار شوکت یوسف زئی کا کہنا ہے: ’’یہ بہت واضح ہے کہ صوبہ خیبر پختونخواہ میں پی ٹی آئی سب سے بڑی جماعت بن کر ابھری ہے، لہٰذا ہم یہاں ہم خیال جماعتوں کی مدد سے اپنی حکومت بنائیں گے۔‘‘

انہوں نے مزید کہا: ’’ہم ان تمام جماعتوں اور ارکان اسمبلی کے ساتھ اتحاد بنائیں گے جو کبھی بدعنوانی میں ملوث نہیں رہے۔‘‘

طالبان کی انتہاپسندی کے حوالے سے خیبر پختونخواہ فرنٹ لائن صوبہ ہے، جہاں تقریباﹰ ہر روز ہی کوئی نہ کوئی دھماکا یا فائرنگ کا واقعہ رُونما ہوتا ہے جس کے لیے شدت پسندوں کو ذمہ دار قرار دیا جاتا ہے۔

عمران خان عسکری کارروائیوں کے خاتمے اور طالبان سے بات چیت کے لیے زور دیتے رہے ہیں۔ وہ رواں ہفتے ایک پارٹی ریلی کے دوران اسٹیج پر چڑھتے ہوئے لِفٹ سے گر کر زخمی ہو گئے تھے اور اس وقت ہسپتال میں زیر علاج ہیں۔ اسد عمر کا کہنا ہے کہ وہ ہسپتال سے ہی انتخابی نتائج پر نظر رکھے ہوئے ہیں۔

دوسری جانب پی ٹی آئی نے عام انتخابات میں شکست بھی تسلیم کر لی ہے اور ان میں فتح کے لیے پاکستان مسلم لیگ نواز کو مبارکباد بھی دے دی ہے۔ تاہم خبر رساں ادارے اے ایف پی کے عمر اسد نے ایک ٹیلی وژن چینل سے گفتگو میں اپنی جماعت کو شکست خوردہ تسلیم کرنے سے انکار کیا ہے۔

پاکستان الیکشن کمیشن کے سربراہ فخر الدین ابراہیم نے ہفتے کو ووٹنگ کے اختتام پر ایک نیوز کانفرنس سے خطاب میں کہا: ’’ہم نے آپ (عوام) کو صاف اور شفاف انتخابات دیے۔ اب بال آپ کے کورٹ میں ہے، آپ دیکھیں گے کہ آپ کو بہتر نظم و نسق ملے گا۔‘

پاکستان میں ہفتے کو لاکھوں شہریوں نے 342 رکنی قومی اسمبلی اور صوبہ پنجاب، سندھ، بلوچستان اور خیبر پختونخواہ کی چار اسمبلیوں کے لیے ووٹ دے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں