.

امریکا میں پاکستانی سفیر شیری رحمان مستعفی

حالیہ عام انتخابات میں سابق حکمراں پی پی پی کی بدترین شکست کے بعد فیصلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

امریکا میں پاکستان کی سفیر شیری رحمان اپنے عہدے سے مستعفی ہوگئی ہیں اور انھوں نے اپنا استعفیٰ نگران وزیراعظم میر ہزار خان کھوسو کو بھجوا دیا ہے۔

شیری رحمان نے حالیہ عام انتخابات میں سابق حکمراں پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی) کی بدترین شکست کے بعد سفارتی ذمے داریوں سے سبکدوش ہونے کا فیصلہ کیا ہے۔وہ 2002ء میں پہلی مرتبہ پی پی پی کے ٹکٹ پر قومی اسمبلی کی خواتین کی مخصوص نشست پر رکن منتخب ہوئی تھیں اور 2008ء میں دوسری مرتبہ ایوان زیریں کی رکن بنی تھیں۔

وہ واشنگٹن میں سفیر مقرر ہونے سے قبل پیپلز پارٹی کی حکومت میں وفاقی وزیراطلاعات ونشریات رہی تھیں۔انھیں نومبر 2011ء میں سابق سفیر حسین حقانی کی جگہ امریکا میں پاکستان کی سفیر مقرر کیا گیا تھا۔

پی پی پی کی عام انتخابات میں ملک کے تین صوبوں میں بدترین شکست کے بعد پارٹی کے متعدد اعلیٰ عہدے دار مستعفی ہوگئے ہیں۔پارٹی کے سنئیر وائس چئیرمین سید یوسف رضا گیلانی اور وسطی پنجاب کے صدر میاں منظور احمد وٹو نے اپنے عہدے چھوڑ دیے ہیں اور پارٹی کے ایک سنئیر رہ نما چودھری اعتزاز احسن نے منگل کو پارلیمان کے ایوان بالا سینیٹ کی رکنیت سے استعفیٰ دے دیا ہے۔