.

ایل او سی پر بھارتی فائرنگ، پاکستانی فوجی جاں بحق

بھارت نے پونچھ سیکٹر میں فوج بڑھا دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

ہندوستانی فوج کی لائن آف کنٹرول پر بلا اشتعال فائرنگ سے پاکستان فوج کا ایک سپاہی جاں بحق جبکہ دوسرا زخمی ہو گیا۔

پاکستان فوج کے شعبہ تعلقات عامہ 'آئی ایس پی آر' کے مطابق، پڑوسی ملک کی فوج نے ہفتہ کی صبح ساڑھے دس بجے کے قریب راولاکوٹ میں نیزا پیر سیکٹر پر فائرنگ کی۔

فائرنگ سے ضلع راولپنڈی کے گاؤں چواریاں سے تعلق رکھنے والا پاکستان فوج کا سپاہی عاصم اقبال جاں بحق جبکہ نائیک محمد خان شدید زخمی ہوگئے۔

ادھر بھارت نے لائن آف کنٹرول پر پونچھ سیکٹر میں اپنی فوج کی تعداد بڑھا دی ہے، یہ اقدام بھارتی فوجی حکام کے مطابق پاک فوج کی طرف سے صبح سویرے لائن آف کنٹرول کی بھاری اسلحے سے خلاف ورزی کے بعد کیا گیا ہے۔ بھارتی حکام کا کہنا ہے کہ رواں ماہ کے دوران فا ئرنگ کا یہ پانچواں واقعہ ہے۔

بھارتی میڈیا رپورٹس میں کہا گیا ہے کہ پاکستان کی فوج نے ہفتے کی صبح بھارتی وقت کے مطابق پونچھ کے علاقے میں ڈوڈا بٹالین فارورڈ ایریا میں بھارتی فوجی چوکیوں کو راکٹوں سے نشانہ بنایا، تاہم کوئی جانی نقصان نہیں ہوا ہے۔ فوجی حکام کے مطابق بھارتی فوج نے بھی جوابی فائرنگ کی۔

بھارت کے ایک سینیئر عہدے دار کے مطابق پاک فوج کی فائرنگ سے علاقے میں خوف پھیل گیا جس کے بعد متاثرہ علاقے کی فوجی مانیٹرنگ فوری طور پر شروع کر دی گئی ہے اور مزید فوج بھی بھجوا دی گئی ہے۔

بھارتی فوجی حکام کا دعویٰ ہے کہ پاکستان کی طرف سے ماہ جولائی کے دوران لائن آف کنٹرول کا پانچواں بڑا واقعہ ہے۔ اس سے پہلے جولائی کے دوران پہلا واقعہ 3 جولائی کو پیش آیا جب پاکستان نے سیز فائر کی خلاف ورزی کرتے ہوئے لائن آف کنٹرول پر موجود پولیس اہلکار پر فائرنگ کی تاکہ وہ پونچھ میں آنے والے ایک مبینہ پاکستانی کی لاش واپس لے سکیں۔

اسی طرح بھارتی حکام کے مطابق پاکستانی فوج نے 8، 12 اور 22 جولائی کو بھی لائن آف کنٹرول پر سیز فائر کی خلاف ورزی کی۔