.

پاکستان: یو ٹیوب پر پابندی، ٹافی ویب ٹی وی بھی زد میں

''ٹافی'' نے بچوں کے گیت یو ٹیوب پر ''اپ لوڈ'' کر رکھے تھے

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان میں کچھ عرصہ پہلے بچوں کے لیے "ٹافی ٹی وی" کے نام سے شروع کی جانے والی ویب سائٹ کی نشریات کو بھی سماجی رابطے کی ویب سائٹ "یو ٹیوب" کے ساتھ طویل عرصے سے بندش کا سامنا ہے۔ اس ویب سائٹ نے لوگوں کی توجہ اپنی طرف مبذول کرنے کے لئے اور بچوں کو زبان سکھانے کی خاطر متعدد گیت تیار کر کے یو ٹیوب پر "اپ لوڈ" کئے تھے۔ یو ٹیوب پر عائد پابندی سے گندم کے ساتھ گھن کے پس جانے کے مصداق ٹافی ویب ٹی وی بھی پابندی کی زد میں آگ یا ہے۔

سرکاری ذرائع کا کہنا ہے کہ ویب سائٹ پر پابندی کا یہ اقدام دنیا بھر کے مسلمانوں کے دینی جذبات کو ٹھیس پہنچانے والی فلم کی وجہ سے عائد کی گئی تھی۔ مگر اس کے نتیجے میں پیش آنے والے حالات کی وجہ سے بہت سی کمپنیوں، اساتذہ اور طلبا مشکلات کا شکار ہیں۔

پاکستان کی ایک عدالت میں اس پابندی کے حوالے مقدمے کی اب تک ہونے والی سماعتوں کے دوران اس بات پر بحث کی گئی ہے کہ اس پابندی کو برقرار رکھتے ہوئے کس طرح کا راستہ نکالا جائے کہ دنیا تک مسلمانوں کا پیغام بھی پہنچ جائے اور معلومات تک رسائی بھی ممکن رہے۔

اس معاملے کا دلچسپ پہلو یہ ہے کہ تکنیکی اعتبار سے جانکاری رکھنے والے افراد مختلف '' پراکسیز'' لگا کر بغیر کسی روک ٹوک اپنی مطلوبہ ویب سائٹس کھول لیتے ہیں۔ ایک اندازے کے مطابق پاکستان میں ایسے لوگوں کی تعداد کم نہیں ہے جو' 'سرف سیفلی'' اور اس طرح کے دوسرے چور راستوں یا "پراکسی سائیٹس" سے نہ صرف اپنی شناخت اور موجود گی کے مقام کو خفیہ رکھ سکتے ہیں بلکہ اپنے علاقے یا ملک میں ممنوعہ سائٹس تک بھی با آسانی پہنچ جاتے ہیں۔

پاکستان میں یو ٹیوب پر پابندی کی وجہ ''مسلمانوں کی معصومیت'' نامی فلم کا ''ٹریلر'' بنا تھا جو آج تک کسی سینما گھر میں نہیں چل سکی ہے۔ فلم کے یو ٹیوب پر شائع والے اشتہار سے دنیا بھر کے مسلمانوں میں ایک ہنگامے کی کیفیت پیدا ہو گئی تھی اور پاکستان میں احتجاج کرنے والے لگ بھگ 19 مظاہرین جاں بحق ہو گئے تھے۔

حکومتی حکام کی طرف سے یو ٹیوب کے ساتھ ساتھ فیس بک پر بھی پابندی لگائی گئی تھی، لیکن بعد ازاں فوری طور پر فیس بک پر عائد کردہ پابندی ختم کر دی گئی۔ مسلمانوں کے جذبات مجروح کرنے والی فلم کو یو ٹیوب سے ہٹانے کے لیے اوباما انتظامیہ نے گوگل سے کہا لیکن گوگل نے ایسا کرنے سے انکار کر دیا۔