پاکستان میں اہل سنت کی احتجاجی ریلیاں، سخت سکیورٹی انتظامات

تعلیم القرآن کے مولانا اشرف کا ریلی امن کیخاطر ریلی نہ نکالنے کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size

دس محرم کو پاکستان کے دارالحکومت اسلام آباد سے جڑواں شہر راولپندی میں فرقہ وارانہ بنیاد پر جلائے جانے والے مدرسے اور ہونے والی ہلاکتوں کی مذمت کیلیے آج اہل سنت مکتبہ فکر کی اپیل پر پورے ملک میں یوم احتجاج کی سرگرمیاں جاری ہیں۔

اسلام آباد سے لیکر ملک کے طول و عرض میں احتجاجی ریلیوں کا سلسلہ نماز جمعہ کی ادائیگی کے بعد تیز ہو گیا۔ حکومت نے اس موقع پر امن وامان برقرار رکھنے کے لیے سخت حفاظتی انتظامات کیے ہیں۔

پولیس کے علاوہ پیرا ملٹری فورسز کے ساتھ ساتھ فوج کی خدمات بھی حاصل کی گئی ہیں۔ ابھی تک کی اطلاعات کے مطابق پاکستان کے عسکری اہمیت کے شہر راولپنڈی اور صنعتی اہمیت کے شہر فیصل آباد میں فوجی تعیناتی اور گشت کا اہتما م کیا گیا ہے۔

اسی طرح کراچی میں رینجرز اور کوئٹہ میں ایف سی تعینات کی گئی ہے۔ راوالپنڈی میں ابتدائی طور پر بعض مظاہرین کے خلاف پولیس نے لاٹھی چارج کیا، تاہم کوئی بڑا مسئلہ ابھی تک سامنے نہیں آیا ہے۔

راولپنڈی سب سے اہم پیش رفت اس وقت سامنے آئی جب دس محرم کو جلائے جانے والے مدرسہ تعلیم القرآن سے وابستہ مولانا اشرف نے رضاکارانہ طور پر کسی ریلی کا حصہ نہ بننے کا اعلان کر دیا اور نماز جمعہ کے شرکاء کے ساتھ ساتھ طلبہ سے اپیل کی کہ وہ پر امن انداز میں گھروں کو واپس چلے جائیں۔

جماعت اہل سنت پاکستان کے سربراہ مولانا محمد احمد لدھیانوی نے بھی اس موقع پر عوام سے صبر کرتے ہوئے پر امن رہنے کی اپیل کی۔

لاہور وفاق المدارس کی اپیل پر یوم احتجاج کرنے والے اہل سنت جماعت کے مظاہرین پرامن انداز میں لاہور پریس کلب کے باہر جمع ہو ئے۔ اس موقع پر جماعت اہل سنت کے رہنماوں اور رضاکاروں نے بھی لوگوں کو پر امن رکھنے کا انتظامی طور پر اہتمام کیا۔

ملک کے سب سے بڑے شہر کراچی میں بھی مختلف مقامات اور مساجد کے باہر احتجاجی ریلیاں نکالی گئیں۔ کراچی میں شیعہ تنظیم نے بھی اپنے مطالبات کے حق میں مظاہرہ کیا۔

پشاور میں ایک اہم احتجاجی ریلی نمک منڈی سے شروع ہوئی اور مظاہرین نے دھرنا بھی دیا۔ کوئٹہ میں وفاق المدارس کی اپیل پر احتجاج کیا گیا۔ علاوہ ازیں صوبہ بلوچستان کے دیگر شہروں سمیت ملک کے تقریبا ہر چھوٹے بڑے قصبے میں احتجاج کیا گیا سہ پہر تک کسی جگہ سے کسی ناخوشگوار واقعے کی اطلاع موصول نہیں ہوئی ہے۔

ادھر اسلام آباد میں ایک اہم احتجاجی ریلی کا آغاز ہوا ہے، اس موقع پر پورے داراحکومت میں سخت حفاظتی اقدامات کیے گئے ہیں۔

مقبول خبریں اہم خبریں