.

سندھ:خوشحال خان ایکسپریس میں بم دھماکا،7 افراد جاں بحق

پشاور میں بم دھماکے میں ایک پولیس اہلکار جاں بحق ،ایک زخمی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کے صوبہ سندھ کے ضلع جیکب آباد میں اتوار کو ایک مسافر ٹرین کو بم حملے کا نشانہ بنایا گیا ہے جس کے نتیجے میں سات افراد جاں بحق اور تیس سے زیادہ زخمی ہوگئے ہیں۔

پشتوزبان کے معروف شاعر خوشحال خان خٹک سے منسوب ایکسپرس ٹرین جنوبی شہر کراچی سے شمال مغربی شہر پشاور کی جانب آرہی تھی۔اس میں ضلع جیکب آباد کے انہڑواہ ریلوے اسٹیشن کے نزدیک بم دھماکا ہوا ہے۔ایک مقامی افسر سردار جمالی نے بتایا کہ دھماکے کے نتیجے میں تین مسافر بوگیاں پٹڑی سے اتر گئیں اور ان میں سے دو بری طرح تباہ ہوگئی ہیں۔

پاکستان ریلویز کے جنرل مینجر انجم پرویز کا کہنا ہے کہ ٹرین کی بوگیوں کو ریموٹ کنٹرول بم کے ذریعے اڑایا گیا ہے اور بم ریل پٹڑی پر نصب کیا گیا تھا۔انھوں نے کہا کہ دھماکے سے آٹھ سو میٹر پٹڑی کو نقصان پہنچا ہے۔فوری طور پر کسی گروپ نے اس بم حملے کی ذمے داری قبول نہیں کی۔

گذشتہ ماہ بھی خوشحال خان خٹک ایکسپریس میں صوبہ پنجاب کے ضلع راجن پور میں بم دھماکا ہوا تھاجس کے نتیجے میں تین افراد ہلاک اور بیس زخمی ہوگئے تھے۔تب خوشحال خان ایکسپریس پشاور سے کراچی جارہی تھی۔

درایں اثناء پشاور میں چارسدہ روڈ پر واقع ایک سی این جی اسٹیشن کے نزدیک بم دھماکے میں ایک پولیس اہلکار جاں بحق اور ایک زخمی ہوگیا ہے۔پشاور کے سپرنٹنڈینٹ پولیس رحیم شاہ نے بتایا ہے کہ بم صحت کا انصاف پروگرام کی ایک پوسٹ کے نزدیک نصب کیا گیا تھا اور یہ دو کلو وزنی تھا۔

پشاور میں حالیہ بم دھماکوں کے بعد صوبائی حکومت نے سکیورٹی کے سخت انتظامات کیے ہیں اور موٹر سائیکل پر ڈبل سواری پر پابندی عاید کردی ہے۔ادھر صوبے کے جنوب مغربی ضلع ہنگو میں قانون نافذ کرنے والے اداروں نے ایک بم کو ناکارہ بنا دیا ہے۔بم پانچ کلو وزنی تھا اور یہ شہر کے علاقے دالان میں ایک پولیس چیک پوسٹ کے نزدیک نصب کیا گیا تھا۔