جنرل راحیل شریف شمالی وزیرستان میں اگلے مورچوں پر

'ضرب عضب' آپریشن میں شریک جوانوں اور افسروں سے ملاقات

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
3 منٹس read

پاکستان فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے شمالی وزیرستان میں شدت پسندوں کے خلاف جاری آپریشن 'ضرب عضب' میں اب تک ہونے والی پیش رفت پر اطمینان کا اظہار کرتے ہوئے کہا ہے کہ ملک کو دہشت گردی کی لعنت سے چھٹکارہ دلا کر رہیں گے۔

فوج کے شعبہ تعلقات عامہ (آئی ایس پی آر) کے ایک بیان کے مطابق جنرل راحیل شریف نے پیر کو شمالی وزیرستان میں اگلے مورچوں کا دورہ کیا اور فوجی جوانوں سے ملاقات کی۔ بیان کے مطابق آرمی چیف نے آپریشن میں حصہ لینے والے فوجیوں پر زور دیا کہ وہ تمام ملکی وغیر ملکی دہشت گردوں اور ان کے ٹھکانوں کو ختم کر دیں۔

آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے شمالی وزیرستان میں دہشت گردوں سے نبرد آزما جوانوں اور افسروں سے ملاقات کی اور ان کی بہادری اور بلند حوصلے کو سراہا۔ آرمی چیف کو آپریشن ضرب عضب پر بریفننگ بھی دی گئی۔ آرمی چیف نے کامیاب آپریشن پر چین آف کمانڈ کو مبارکباد پیش کی اور آپریشن کی پیشرفت پر اطمینان کا اظہار کیا۔

اس موقع پر اپنے خطاب میں پاک فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف کا کہنا تھا کہ پاکستان کو دہشت گردی کی لعنت سے نجات دلائیں گے۔ مقامی اور غیر ملکی دہشت گردوں اور ان کے ٹھکانوں کو ختم کیا جائے گا۔ آپریشن پر پوری قوم کے تعاون کو سراہتے ہیں۔ قوم کے واضع فیصلے اور عزم کیساتھ آپریشن کو مکمل کرینگے۔ دہشت گردوں کے خاتمے تک آپریشن جاری رہے گا۔ دہشتگردوں کا ملک بھر میں تعاقب کیا جائے گا۔ دہشت گردی کے مکمل خاتمے تک تعاقب جاری رہے گا۔

فوجی کاروائی کے نتیجے میں بے گھر ہونیوالے افراد کے ساتھ اظہار یکجہتی کرتے ہوئے جنرل راحیل شریف نے کہا کہ فوج ضرورت کی اس گھڑی میں اپنے قبائلی بھائیوں کو تنہا نہیں چھوڑے گی۔

ادھر قبائلی علاقے شمالی وزیرستان میں شدت پسند طالبان کے خلاف فوجی کارروائی کے نتیجے میں بے گھر ہونیوالے افراد کی تعداد آٹھ لاکھ کے قریب پہنچ گئی ہے۔

قبائلی علاقوں میں آفات سے نمٹنے کے ادارے فاٹا ڈیزاسٹر مینیجمنٹ اتھارٹی کے مطابق چھ جولائی تک آپریشن کے نتیجے میں نقل مکانی کرنیوالے ساڑھے باسٹھ ہزار خاندانوں کا اندراج کیا جا چکا ہے جو کہ سات لاکھ ستاسی ہزار آٹھ سو اٹھاسی افراد پر مشتمل ہیں۔ان میں سب سے زیادہ تعداد بچوں کی ہے جو تین لاکھ چالیس ہزار بنتی ہے۔

ایف ڈی ایم اے کے مطابق اکیس مئی کو آرمی کی جانب سے شمالی وزیرستان میں شدت پسندوں کے ٹھکانوں کو ہدف بنانے کے بعد وہاں سے لوگوں کی نقل مکانی کا سلسلہ جاری ہے۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں