فضائوں میں پاکستانی ملالہ کے نام کی بازگشت

مریخ اور مشتری کے درمیان سیارے کا نام ملالہ رکھ دیا گیا

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
1 منٹ read

پاکستان کی نو بل انعام یافتہ ملالہ یوسفزئی کو امریکا کے خلائی ادارے ناسا نے ایک اور بڑا اعزاز سے نواز دیا ہے۔ مریخ اور مشتری کے درمیان دریافت ہونے والے سیارے کا نام ملالہ رکھ دیا ۔

تفصیلات کے مطابق امریکی خلائی ادارے نے پانچ سال قبل مریخ اور مشتری کے درمیان دریافت ہونے والے 2.5 قطر کے سارچے کا نام ملالہ کے نام پر رکھ دیا ہے جسے پہلے 316201 کا نام دیا گیاتھا۔سیارہ ملالہ ساڑھے پانچ سال میں اپنے مدار کے گرد اپنا چکر مکمل کرتا ہے۔

ناسا سے وابستہ سائنسدان ایمی مینظر نے کہا کہ نئے دریافت ہونے والے سیارے کا نام ملالہ رکھنا اعزاز کی بات ہے کیونکہ انہوں نے ملالہ سے متعلق میگرین کی سٹوری پڑھی ہیں جس کے بعد احساس ہوا کہ ملالہ اس لائق ہیں کہ ان کے سیارے کو ن کے نام سے منسوب کیا جائے۔

انہوں نے کہا کہ جب ان کے ساتھی ڈاکٹر کیری نوگینٹ نے تجویز دی کہ پہلے بھی سارچوں کے نام رکھے گئے اور بہت کم نام کسی کے اعزاز میں رکھے اس لئے نئے دریافت ہونے والے سیارچے کا نام ملالہ کے نام پر رکھا گیا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں