.

سعودی مجلس شوریٰ کے اسپیکر کی نواز شریف سے ملاقات

محمد آل الشیخ سردار ایاز صادق کی دعوت پر پاکستان آئے ہیں

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سعودی مجلس شوریٰ کے اسپیکر ڈاکٹرعبداللہ بن محمد آل الشیخ نے اعلیٰ اختیاراتی وفد کے ہمراہ اسلام آباد میں وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف اور دیگر رہ نماؤں سے ملاقات کی ہے۔ ملاقات میں دونوں برادر ملکوں کے درمیان دوطرفہ تعلقات کے فروغ اور تمام شعبوں میں تعاون بڑھانے سمیت باہمی دلچسپی کےامور پرتبادلہ خیال کیا گیا۔

اسلام آباد سے 'العربیہ' کے نامہ نگار عبدالرحمن کی رپورٹ کے مطابق سعودی مجلس شوریٰ کااسپیکر ڈاکٹر عبداللہ بن محمد آل الشیخ نے اسلام آباد میں وزیراعظم ہاؤس میں میاں نوازشریف سے ملاقات کی۔ وزیر اعظم سیکرٹریٹ کی جانب سے جاری کردہ ایک بیان میں کہا گیا ہے کہ سعودی مجلس شوریٰ کے اسپیکر ڈاکٹر عبداللہ آل الشیخ کی وزیراعظم سے ملاقات کے وقت قومی اسمبلی کے اسپیکر سردار ایاز صادق سمیت دیگر سینئر حکام بھی موجود تھے۔

ملاقات میں سعودی عرب اور پاکستان میں پارلیمانی کونسلوں کے درمیان روابط کے فروغ، پاکستانی قومی اسمبلی اور سعودی مجلس شوریٰ کی قائم کردہ فرینڈ شپ کمیٹیوں کو مؤثر بنانے سمیت دیگر باہمی دلچسپی کے امور پرتبادلہ خیال کیا گیا۔ وزیراعظم نواز شریف نے سعودی مہمان کو شمالی وزیرستان میں عسکریت پسندوں کے خلاف جاری ’’ضرب عضب‘‘ آپریشن کے حوالے سے بھی بریفنگ دی اور کہا کہ یہ آپریشن ملک کی تمام سیاسی قوتوں کی حمایت سے ہو رہا ہے جو نہایت ثمر آور ثابت ہوا ہے۔ انہوں نے کہا کہ دہشت گرد اب راہ فرار اختیار کر رہے ہیں اور بھاگتے ہوئے آسان اہداف کو نشانہ بنانے کوشش کر رہے ہیں۔

بعد ازاں سعودی مجلس شوریٰ کے اسپیکر ڈاکٹرعبداللہ بن محمد آل الشیخ نے قومی اسمبلی کے اسپیکر سردار ایاز صادق سے علاحدہ بھی ملاقات کی۔ ملاقات میں دونوں رہ نماؤں کے درمیان دو طرفہ تعلقات اور تعاون کے فروغ پر تفصیلی تبادلہ خیال کیا۔

خیال رہے کہ سعودی مجلس شوریٰ کے اسپیکر کا حالیہ دورہ پاکستان سردار ایاز صادق کی خصوصی دعوت پر ہوا ہے۔ اس ملاقات میں بھی ڈاکٹر آل الشیخ نے سرادار ایاز صادق کا پاکستان میں دعوت پربلانے کا خصوصی شکریہ ادا کیا۔ ان کا کہنا تھا کہ خادم الحرمین الشریفین شاہ سلمان عبدالعزیز پاکستان سے دلی ہمدردی رکھتے ہیں۔ میرے دورہ پاکستان میں ان کی خواہش بھی شامل ہے۔ سردار ایاز صادق نے سعودی عرب کی عالم اسلام کو متحد کرنے اور دہشت گردی کے خلاف جنگ میں مؤثر کردار کو بھی سراہا اور کہا کہ پاکستان ہرطرح کے حالات میں سعودی عرب کی مدد جاری رکھے گا۔