.

بھارت، پاکستان کو غیر مستحکم کر رہا ہے: جنرل راحیل شریف

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان فوج کے سربراہ جنرل راحیل شریف نے کہا ہے کہ کچھ بین الاقوامی ایجنسیاں بالخصوص ہندوستانی خفیہ ایجنسی 'را' پاکستان اور چین اقتصادی راہدای منصوبے کے خلاف ہیں۔

آرمی چیف جنرل راحیل شریف نے کہا کہ "ضرب عضب صرف ایک آپریشن نہیں، پورا نظریہ ہے اور اس کا مقصد شدت پسندی، دہشت گردی اور کرپشن سنڈیکیٹ کا خاتمہ کرنا ہے۔"

بلوچستان کے ساحلی شہر گوادر میں امن و ترقی کے موضوع پر سیمینار سے خطاب میں ان کا کہنا تھا کہ ’را‘ پاکستان کو غیر مستحکم کرنے میں ملوث ہے۔انہوں نے کہا کہ ملک کے کسی بھی حصے میں بدامنی کی اجازت نہیں دی جائے گی، بین الاقوامی برادری دہشت گردوں کی بیرونی مدد روکنے کے لئے اپنا کردار ادا کرے۔آرمی چیف نے عالمی برادری پر زور دیا کہ وہ پاکستان کی قربانیوں کو تسلیم کرے۔

انہوں نے خوشخبری سنائی کہ بلوچستان میں اس سال کے آخر تک 870 کلومیٹر روڈ مکمل کر لیا جائے گا اور اس سال کارگو چین سے گوادر اور آگے جانا شروع ہو جائے گا۔

ان کا کہنا تھا سی پیک کی سیکیورٹی ہماری قومی ذمہ داری ہے اور اس مقصد کے لئے 15 ہزار افراد پر مشتمل فورس تشکیل دیدی گئی ہے۔ آرمی چیف نے واضح کیا کہ دہشت گردوں کے ساتھ سہولت کاروں کا بھی خاتمہ کیا جائے گا۔

یہ بات قابل ذکر ہے کہ پاکستانی فوج کے سربراہ کا ہندوستانی ایجنسی سے متعلق بیان ایک ایسے موقع پر سامنے آیا ہے جب گزشتہ ماہ بلوچستان سے بھارتی جاسوس اور نیوی کے حاضر سروس افسر کلبھوشن یادیو کو گرفتار کیا گیا تھا۔