.

اسلام آباد کی اہم شاہراہ پر کالعدم داعش کا پرچم کس نے لہرایا؟

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان میں قانون نافذ کرنے والے اداروں نے صدر مقام اسلام آباد سے کالعدم شدت پسند گروپ داعش کے جھنڈے قبضہ میں لیے ہیں۔

شام اور عراق میں سرگرم اس گروپ کے جھنڈے وفاقی دارالحکومت کی مصروف ترین شاہراہ ایکسپریس ہائی وے پر اقبال ٹاون کے مقام پر ایک پل پر لگائے گئے تھے۔

کالعدم تنظیم کے جھنڈے نامعلوم افراد کی جانب سے لگائے گئے جن پر داعش کا ”لوگو“ بھی بنا تھا۔ جھنڈوں پر”خلافت آ رہی ہے “ کے نعرے بھی درج تھے جس پر لوگوں میں خوف وہراس پھیل گیا۔

ایک پولیس اہلکار نے بتایا کہ داعش کے مونوگرام والے جھنڈے اقبال ٹاون میں پل پر لگائے گئے تھے۔ پولیس نے یہ جھنڈے لگنے کی اطلاع دینے والے شخص کو حراست میں لیا ہے جس نے اپنے تحریری بیان میں کہا کہ اس نے ٹی وی پر داعش کے جھنڈے دیکھ رکھے تھے لہذا اسلام آباد میں نظر آنے پر اس نے پولیس کو اپنے موبائل فون سے اطلاع دی۔

ابھی تک پولیس اور انٹیلی جنس ایجنسیوں کو معلوم نہیں ہو سکا کہ انتہائی محفوظ علاقے میں جھنڈے لہرانے والے کون ہیں اور نہ ہی اس حوالے سے گرفتاریاں سامنے آئی ہیں۔ پولیس کا کہنا ہے کہ تحقیقات کے دوران علاقے میں مختلف مقامات پر نصب کیمروں کی مدد سے ملوث افراد کو شناخت کرنے کی کوشش کی جائے گی۔

پولیس کا کہنا ہے کہ ملزمان کی شناخت کےلیے پرنٹنگ کا کاروبار کرنے والے کچھ مقامی لوگوں سے بھی معلومات اکھٹی کی جائیں گی۔

یہ امر قابل ذکر ہے کہ قبل ازیں بھی ملک کے مختلف علاقوں سے ایسی خبریں سامنے آتی رہی ہیں کہ بعض افراد کی طرف سے داعش کے حق میں نعرے اور پمفلٹ تقیسم کرنے کی کوشش کی گئی۔