.

امام حرم مکی شیخ صالح بن محمد الطالب کی جی ایچ کیو میں آرمی چیف سے ملاقات

امام حرم مکی شیخ صالح بن محمد ابراہیم کا پارلیمنٹ ہاوس کا دورہ، عوام کے لئے نیک خواہشات کا اظہار

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

آرمی چیف جنرل قمر جاوید باجوہ نے کہا ہے کہ سعودی عرب اور پاکستان کے درمیان برادرانہ اور باہمی اعتماد کا رشتہ ہے۔ دونوں ممالک امن و استحکام اور مسلم امہ کی بہتری کے لیے اپنا کردار جاری رکھیں گے وہ پیر کو امام حرم مکی ڈاکٹر صالح بن محمد الطالب سے گفتگو کر رہے تھے، جنہوں نے جی ایچ کیو میں ان سے ملاقات کی۔

آئی ایس پی آر کے مطابق ملاقات میں باہمی دلچسپی کے امور پر تبادلہ خیال کیا گیا اس موقع پر امام حرم مکی نے کہا کہ پاکستان کا مسلم دنیا میں ایک اہم مقام ہے اور پاکستان علاقے کے اندر امن و استحکام کے لیے اپنا اہم کردار ادا کر رہا ہے۔

درایں اثنا امام حرم مکی شیخ صالح بن محمد ابراہیم نے پیر کے روز پارلیمنٹ ہاوس کا دورہ بھی کی۔ اس موقع پر انہوں نے عوام پاکستان کے لئے نیک خواہشات کا اظہار کیا۔ امام حرم مکی نے قومی اسمبلی کے ہال کا دورہ بھی کیا اور پاکستان کے جمہوری ایوان میں آ کر انتہائی خوش دکھائی دیئے۔

پاکستان اور سعودی عرب کا دکھ سکھ اور منزل ایک ہے۔ پاک، سعودی عرب تعلقات امن، ترقی اور خوشحالی کی علامت ہیں کشمیر پاکستان کا حصہ ہے اور اہل کشمیر کو اپنی دعائوں میں یاد رکھتے ہیں۔ شیخ صالح بن محمد ابراہیم نے ان جذبات کا اظہار سپیکر قومی اسمبلی سردار ایاز صادق سے ملاقات میں کیا۔ پارلیمینٹ ہاؤس آنے پر زبردست خیرمقدم کیا گیا ۔

امام حرم مکی شیخ صالح بن محمد ابراہیم اور سپیکر قومی اسمبلی کے درمیان ملاقات ہوئی۔ مسئلہ کشمیر کو موثر اندازمیں اجاگر کرنے کے معاملات پر خصوصی طور پر بات چیت ہوئی ملاقات میں وفاقی وزیر مذہبی امورسردار محمد یوسف ، ڈپٹی سپیکر قومی اسمبلی مرتضیٰ جاوید عباسی جماعت اسلامی کے پارلیمانی رہنما صاحبزادہ طارق اللہ، ایم کیو ایم کے رہنما شیخ صلاح الدین، پاکستان میں سعودی عرب کے سفیر اور ارکان قومی اسمبلی اور سینیٹرز بھی موجود تھے۔

دورے کے بعد جاری اعلامیہ کے مطابق ملاقات میں مسلم اُمہ کو درپیش مسائل پر تفصیلی گفتگو ہوئی۔ سپیکر قومی اسمبلی نے کہا کہ پاکستانی عوام سعودی عرب کے ساتھ گہری وابستگی رکھتے ہیں۔ مسلم اُمہ کو بے شمار مسائل نے اپنی لپیٹ میں لے رکھا ہے،، سپیکر سردارایازصادق نے کہا کہ مسلم ممالک کو آپس کے تمام باہمی اختلافات کو بھلا کر اُمہ کو یکجا کرنے کی ضرورت ہے۔ سپیکر قومی اسمبلی نے کہا کہ اسلام امن اور بھائی چارے کا درس دیتا ہے، دہشتگردی اور انتہاپسندی کی کوئی مذہب اجازت نہیں دیتا ۔

امام حرم مکی نے کہا کہ سعودی عرب پاکستان سمیت تمام مسلم ممالک کے ساتھ اپنے تعلقات کو بڑی اہمیت دیتا ہے۔ مسلم اُمہ کو درپیش چیلنجزکے حل کے لیے سعودی عرب ہمیشہ اپنا مثبت کردار ادا کرتا رہے گا۔ شیخ صالح بن محمد ابراہیم نے کہا کہ کشمیر پاکستان کا حصہ ہے اور اہل کشمیر کو اپنی دعائوں میں یاد رکھتے ہیں۔ امام حرم مکی نے کہا کہ پاکستان اور سعودی عرب کا دکھ سکھ اور منزل ایک ہے ۔ دونوں ممالک نے دہشت گردی کے خاتمے کے لیے مشترکہ کوشیش کیں ہیں جس میں کامیاب ہوئے ہیں۔ امام حرم مکی نے عوام پاکستان کی سلامتی کی دعا کرتے ہوئے کہا کہ پاک ۔سعودی عرب تعلقات امن، ترقی اور خوشحالی کی علامت ہیں