.

فیفا نے پاکستان کی رکنیت بحال کر دی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان فٹبال کیلئے اچھی خبر سامنے آ گئی ہے. فیفاء نے پاکستان فٹبال فیڈریشن کی رکنیت بحال کردی ہے. لاہور ہائی کورٹ کے 2 رکنی بنچ کے فیصلے کے بعد پاکستان فٹبال فیڈریشن کا کنٹرول اور اکاونٹس فیصل صالح حیات کی سربراہی میں منتخب کردہ فیڈریشن کے حوالے کر دیئے گئے تھے. جس کا کنٹرول سنبھالتے ہی پاکستان فٹبال فیڈریشن نے 3 مارچ 2018 کو فٹبال کی انٹرنیشنل باڈی فیفاء کو پاکستان پر عائد پابندی ختم کرنے کی درخواست کی تھی. عدالت میں فٹبال کے معاملات جانے اور حکومتی مداخلت کے باعث فیفاء نے پاکستان فٹبال فیڈریشن پر تیسری پارٹی کی مداخلت کا الزام لگا کر پاکستان کی فیفاء میں رکنیت معطل کردی تھی.

جس پر فیفاء نے 3 مارچ 2018 کو پاکستان کی درخواست پر فوری پابندی ختم کرنے کا حکم جاری کردیا ہے. پاکستان فٹبال فیڈریشن کے جنرل سیکرٹری احمد یار لودھی کے نام فیفاء کی جانب سے لکھے خط میں واضح طور پر لکھا گیا ہے کہ عدالتی فیصلے میں پاکستان فٹبال فیڈریشن کے اکاؤنٹس اور کنٹرول ایڈمنسٹر سے واپس لے کر پاکستان فٹبال فیڈریشن کے حوالے کیے گئے. جس پر فیفاء نمائندے کا کہنا ہے کہ پاکستان کی رکنیت معطل کرنے کے فیصلے میں واضح طور پر لکھا گیا تھا کہ اگر فیفاء ہاوس کا کنٹرول اور اکاونٹس پاکستان فٹبال فیڈریشن کے سپرد کردیئے جاتے ہیں تو پاکستان کی رکنیت واپس بحال کردی جائے گی. اب جبکہ ایسا ہوگیا ہے تو پاکستان کی رکنیت فوری بحال کردی گئی ہے.

رکنیت بحالی کے بعد پاکستان فٹبال فیڈریشن فیفاء کے ڈویلمپنٹ پروگرامز، ٹورز، پروگرامز اور کورسز میں شامل ہوسکتا ہے. پابندی ختم ہونے پر پاکستان فٹبال فیڈریشن کے کھلاڑی اور ٹیم غیرملکی ایونٹس میں شرکت بھی کرسکتے ہیں.