.

’’یمنی حوثی شراور فساد کا منبع ہیں،انھوں نے سعودی عرب نہیں، عالم اسلام پر حملہ کیا‘‘

حوثی باغیوں کے پس پشت قوتیں مسلمانوں کی وحدت کو منتشر کرنے کے درپے ہیں:مولانا فضل الرحمان خلیل

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

تحریک دفاعِ حرمین شریفین کے سیکریٹری جنرل اور سربراہ انصار الاُمہ پاکستان مولانا فضل الرحمان خلیل نے یمن کے حوثی باغیوں کے سعودی عرب کے دارالحکومت الریاض اور دوسرے شہرو ں کی جانب میزائل حملوں کی شدید الفاظ میں مذمت کی ہے اور کہا ہے کہ سعودی عرب عالم اسلام کا مرکز ومحور ہے، اس پر حملہ عالم اسلام پر حملے کے مترادف ہے۔

انھوں نے یمنی حوثیوں کے سعودی عرب پر میزائل حملے کے ردعمل میں ایک بیان میں کہا کہ باطل قوتیں ایک عرصے سے سر زمین حرمین شریفین کے خلاف گھناؤنی سازشوں میں مصروف عمل ہے۔ان کی کوشش ہے کہ کسی بھی طرح سر زمین امن کو خون ریزی کی طرف دھکیلا جائے لیکن اسلام دشمن قوتوں کے عزائم کوکبھی کامیاب نہیں ہونے دیا جائے گا۔

انھوں نے کہا کہ ہم سعودی عرب اور حرمین شریفین کے دفاع کو ایک سمجھتے ہیں اور دونوں کا دفاع ہم پر فرض ہے۔ انھوں نے یمن کے حوثی باغیوں کو شر و فساد کا منبع قرار دیتے ہوئے کہا کہ ان کے پس پشت قوتیں مسلمانوں کی وحدت کو منتشر کرنے کے درپے ہیں۔

مولانا فضل الرحمان خلیل نے بین الاقوامی برادری سے بھی اپیل کی ہے کہ حوثی باغیوں کی اس دہشت گردی کا سخت نوٹس لیا جائے۔ ان کا کہنا تھا کہ ہم مشکل کی اس گھڑی میں اپنے سعودی بھائیوں کے ساتھ کھڑے ہیں اور انہیں یقین دلاتے ہیں کہ دفاع حرمین کی خاطر کسی قربانی سے دریغ نہیں کریں گے۔