.

نوبل انعام یافتہ ملالہ یوسفزئی کی وزیر اعظم پاکستان سے ملاقات

ملالہ ان دنوں پاکستان کے چار روزہ دورے پر ہیں، جس میں وہ ہم ملاقاتیں کریں گی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کے وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سے ملالہ یوسف زئی کی ملاقات ہوئی ہے۔ وزیر مملکت مریم اورنگزیب، انوشہ رحمان اور ماروی میمن بھی وزیر اعظم اور ملالہ کی ملاقات کے دوران موجود تھیں۔

واضح رہے کہ نوبل انعام یافتہ ملالہ یوسف زئی ساڑھے پانچ سال بعد وطن واپس پہنچی ہیں۔ وہ والدین اور گھر والوں کے ساتھ رات گئے وطن واپس پہنچیں، جہاں ہوٹل پہنچنے پر ان کا شاندار استقبال کیا گیا۔

ملالہ پر 9 اکتوبر 2012ء کو مینگورہ میں اسکول سے گھر جاتے ہوئے حملہ کیا گیا تھا، حملے کے بعد ملالہ علاج کے لیے برطانیہ چلی گئی تھیں۔

وہ صحت یاب ہونے کے بعد سے ہی برطانیہ میں مقیم ہیں، جبکہ وہ اس دوران اقوام متحدہ اور دنیا کے مختلف ممالک میں لیکچر بھی دے چکی ہیں، انہوں نے اہم شخصیات سے ملاقات بھی کی ہے۔

ادھر زندگی کے مختلف شعبوں سے تعلق رکھنے والے افراد اور ادارے ملالہ کی وطن واپسی پر انہیں خوش آمدید کہہ رہے ہیں۔ معرقف اداکارہ ماہرہ خان نے نوبل انعام یافتہ ملالہ یوسف زئی کو تقریباً ساڑھے 5 سال بعد وطن آمد پر خوش آمدید کہا ہے۔

سوات کی گل مکئی کی ساڑھے 5 سال بعد وطن واپسی پر سوشل میڈیا صارفین کی جانب سے جہاں ملا جلا ردعمل سامنے آرہا ہے وہیں اداکارہ ماہرہ خان نے ملالہ کو پاکستان واپسی پر نہایت خوش گوار انداز میں خوش آمدید کہا ہے۔ ماہرہ خان نے ملالہ کی آمد پر ٹوئٹ کرتے ہوئے انہیں چھوٹی بچی سے تشبیہ دیتے ہوئے کہا’’بے بی گرل ملالہ، گھر میں خوش آمدید‘‘۔

ملالہ کی آمد پر ماہرہ خان کے ساتھ پاکستان کی دیگر شخصیات نے بھی اپنا ردعمل کا اظہار کیا ہے۔ پی ٹی آئی چیئرمین عمران خان کی سابق اہلیہ ریحام خان نے ٹوئٹ کرتے ہوئے ملالہ کو ڈھیر سارے پیار اور دعاؤں سے نوازا۔

واضح رہے کہ آج سے تقریباً ساڑھے پانچ سال قبل ملالہ یوسف زئی پر طالبان کی جانب سے قاتلانہ حملہ کیا گیا تھا جس میں وہ بچ گئی تھیں بعد ازاں وہ علاج کی غرض سے برطانیہ منتقل ہو گئی تھیں۔