.

کشمیر میں بھارتی مظالم کا معاملہ دوطرفہ اور کثیر جہتی فورمز پر اٹھانے کا فیصلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کی سرکردہ سیاسی اور عسکری قیادت پر مشتمل قومی سلامتی کمیٹی نے مقبوضہ کشمیر میں وحشیانہ بھارتی مظالم کا معاملہ دوطرفہ اور کثیر جہتی فورمز پر اٹھانے کا فیصلہ کیا ہے۔

یہ فیصلہ اسلام آباد میں قوم سلامتی کمیٹی کے بیسویں اجلاس میں کیا گیا جس کی صدارت وزیراعظم شاہد خاقان عباسی نے کی۔ اجلاس میں دوسروں کے علاوہ تینوں مسلح افواج کے سربراہان نے شرکت کی۔

کمیٹی نے حق خودارادیت کے لئے کشمیریوں کی منصفانہ جدوجہد کی سیاسی، سفارتی اور اخلاقی حمایت جاری رکھنے کے پاکستان کے عزم کا اعادہ کیا۔ کمیٹی نے مقبوضہ کشمیر میں بھارتی فورسز کی طرف سے دہشت گردی کی حالیہ کارروائیوں کی شدید مذمت کی جس میں بیس بے گناہ شہری شہید اور سینکڑوں مرد، خواتین اور بچے شدید زخمی ہوئے۔

قومی سلامتی کمیٹی نے وسیع تر تناظر میں علاقائی صورتحال کا بھی جائزہ لیا اور جنوبی ایشیا میں امن واستحکام کے لئے پاکستان کے کردار پر اطمینان ظاہر کیا۔