ابوظبی کے سربراہ کی جانب سے پاکستان کے 200 ملین ڈالر امداد کا اعلان

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:
مطالعہ موڈ چلائیں
100% Font Size
دو منٹ read

متحدہ عرب امارات اور پاکستان کے درمیان اسلام آباد میں ایک معاہدے پر دستخط کئے گئے جس کے تحت یو اے ای پاکستان کو دو سو ملین ڈالر کی امداد دے گا جسے یو اے ای پاکستان اسسٹنس پروگرام کا تیسرا مرحلہ مکمل کرنے کے لئے استعمال کیا جائے گا۔

معاہدے پر دستخط عزت ماب شیخ خلیفہ بن زاید آل نہیان کی ہدایت ، ابوظبی کے ولی عہد اور اماراتی مسلح فوج کے ڈپٹی کمانڈر عالی مرتبت شیخ محمد بن زاید آل نہیان کی حمایت اور ابوظبی کے نائب وزیر اعظم اور وزیر برائے صدارتی امور شیخ منصور بن زاید آل نہیان کی نگرانی میں کئے گئے ہیں۔ معاہدے کا مقصد پاکستان کو فوری انسانی امداد کی فراہمی کو یقینی بنانا ہے۔

متحدہ عرب امارات کی جانب سے پاکستان کی معاونت کا پروگرام شروع کرنے کا مقصد پاکستان کے عوام کو انسانی مدد فراہم کرنا ہے تاکہ وہ اپنے ترقیاتی اہداف حاصل کر کے مستقبل کو بہتر بنا سکیں۔ اس پروگرام کے تحت ایسے امدادی منصوبوں کی تکمیل ہے جن سے مستفید ہونے والے تادیر اور پائیدار فائدہ اٹھا سکیں۔

معاہدے پر دستخط اسلام آباد میں ہوئے۔ اس معاہدے کے لئے رقم ابوظبی ترقیاتی فنڈ فراہم کرے گا۔ دستخط کی تقریب میں یو اے ای پاکستان اسسٹنس پروگرام کے ڈائریکٹر عبداللہ خلیفہ الجفلی، میجر جنرل انوار الحق چوہدری، کمانڈنٹ ملڑی کالج آف انجینئرنگ نے معاہدے پر دستخط کئے جبکہ اس موقع پر پاکستان فوج کےسربراہ جنرل قمر جاوید باجوہ اور پاکستان میں یو اے ای کے سفیر حماد عیبد الزعبی بھی موجود تھے۔

تقریب کے اختتام پر متحدہ عرب امارات کے نمائندوں نے پاکستان فوج کے سربراہ کو ایک یادگاری شیلڈ پیش کی جو انہیں 51 برس قبل شیخ زاید بن سلطان آل نہیان کی جانب سے پاکستان کے لیے انسانی امداد شروع کئے جانے کی یاد دلاتی رہے گی۔ شیخ زاید نے یہ پروگرام 1967 میں شروع کیا تھا۔

مقبول خبریں اہم خبریں

مقبول خبریں