.

نواز شریف اور مریم نواز کا نام ای سی ایل میں ڈال دیا گیا

نیب کا نواز شریف اور مریم نواز کو لاہور ائیرپورٹ سے ہی گرفتار کرنے کا فیصلہ

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

سابق وزیراعظم میاں محمد نواز شریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز کا نام ای سی ایل ایگزٹ کنٹرول لسٹ [ای سی ایل] میں ڈال دیا ہے۔

مقامی میڈیا کے مطابق سیکرٹری داخلہ نے دونوں کے نام ای سی ایل میں ڈالنے کی منظوری دیدی ہے۔

میاں نوازشریف اور ان کی صاحبزادی مریم نواز نے 13 جولائی کو وطن واپسی کا اعلان کیا ہے جب کہ نیب نے انہیں لاہور سے ہی اڈیالہ جیل منتقل کرنے کا فیصلہ کیا ہے۔

اس سے قبل نیب نے فروری، جون اور جولائی میں نوازشریف اور مریم نواز کا نام ای سی ایل میں ڈالنے کیلئے وزارت داخلہ کو خطوط لکھے تھے جس پر وزارت داخلہ نے اپنے طے شدہ طریقہ کار اور قانون پر عملدرآمد کرتے ہوئے ان کا نام ای سی ایل میں نہیں ڈالا تھا۔

مگر پاکستان کے قانون کے مطابق جن افراد کے خلاف کوئی عدالت فیصلہ دے اور وہ بیرون ملک ہوں تو تعزیرات پاکستان کے تحت ان کا نام ای سی ایل میں آجاتا ہے اور اس قانون کے تحت مذکورہ شخص جیسے ہی وطن واپس آتا ہے اسے ائیرپورٹ پر ہی گرفتار کرلیا جاتا ہے۔

یاد رہے کہ اسلام آباد کی احتساب عدالت نے ایون فیلڈ ریفرنس کیس میں سابق وزیرِاعظم میاں نواز شریف کو 10 سال قید، ایک ارب 29 کروڑ روپے جرمانہ، مریم نواز کو 7 سال قید، 32 کروڑ روپے جرمانہ، شریف فیملی کے ایون فیلڈ اپارٹمنٹس بحقِ سرکار ضبط کرنے کا حکم اور کیپٹن ریٹائرڈ صفدر کو بھی ایک سال قید بامشقت کی سزا سنائی۔