.

وزیراعظم عمران خان نے اپنی 21 رکنی کابینہ کو حتمی شکل دے دی

اسد عمر وزیر خزانہ ، شاہ محمود قریشی وزیر خارجہ ، پرویز خٹک وزیر دفاع ہوں گے، وفاقی کابینہ سوموار کو حلف اٹھائے گی

پہلی اشاعت: آخری اپ ڈیٹ:

پاکستان کے نئے وزیراعظم عمرا ن احمد خان نیازی نے اپنی کابینہ کو حتمی شکل دے دی ہے۔ پاکستان تحریک انصاف ( پی ٹی آئی) کے میڈیا دفتر کی جانب سے ہفتے کے روز جاری کردہ ایک بیان کے مطابق وفاقی کابینہ میں سولہ وزراء اور پانچ مشیر شامل ہوں گے۔

توقع ہے کہ نئی کابینہ سوموار کو ایوان ِ صدر اسلام آباد میں حلف اٹھائے گی۔وزراء اور ان کے محکموں کے نام یہ ہیں:
ڈاکٹر محمد فروغ نسیم : قانون اور انصاف
ریاستیں اور سرحدی علاقہ جات ( سیفران): چودھری طارق بشیر چیمہ
مذہبی امور اور بین المذاہب ہم آہنگی : نورالحق قادری
انسانی حقوق : ڈاکٹر شیریں مزاری
پیٹرولیم ڈویژن : غلام سرور خان
دفاعی پیداوار : زبیدہ جلال
اطلاعات اور نشریات ڈویژن : فواد چودھری
قومی صحت خدمات ، قواعد وضوابط اور رابطہ کاری :عامر محمود کیانی
وزارتِ خارجہ : شاہ محمود قریشی
وزارتِ دفاع : پرویز خٹک
خزانہ ، ریونیو اور اقتصادی امور : اسد عمر
وزیر ریلوے : شیخ رشید احمد
بین الصوبائی رابطہ : ڈاکٹر فہمیدہ مرزا
اطلاعاتی ٹیکنالوجی اور ٹیلی مواصلات : خالد مقبول صدیقی
وفاقی تعلیم اور پیشہ ورانہ تربیت ، قومی تاریخ ،ادب ورثہ ڈویژن : شفقت محمود
آبی وسائل : مخدوم خسرو بختیار
وزیراعظم کے پانچ مشیروں کے نام اور ان کے محکمے یہ ہیں :
اسٹیبلشمنٹ ڈویژن : محمد شہزاد ارباب
تجارت ، ٹیکسٹائل ، صنعت ، پیداوار اور سرمایہ کاری : عبدالرزاق داؤد
ادارہ جاتی اصلاحات : ڈاکٹر عشرت حسین
موسمیاتی تبدیلی : ملک امین اسلم
پارلیمانی امور : ظہیر الدین بابر اعوان

عمران خان کی کابینہ میں شامل کیے جانے والے ان وزراء اور مشیروں میں سے بیشتر ماضی کی حکومتوں کا حصہ بھی رہے تھے اور وہ وفاقی یا کسی صوبائی کابینہ میں شامل رہے تھے۔واضح رہے کہ میں اٹھارھویں آئینی ترمیم کے تحت وفاقی کابینہ کے ارکان کی تعداد پارلیمان کے دونوں ایوانوں سینیٹ اور قومی اسمبلی کے مجموعی ارکان کا گیارہ فی صد سے زیادہ نہیں ہونی چاہیے۔